تجاوزات کراچی کا بڑا مسئلہ تھا: عشرت العباد کی چیف جسٹس سے گفتگو -
The news is by your side.

Advertisement

تجاوزات کراچی کا بڑا مسئلہ تھا: عشرت العباد کی چیف جسٹس سے گفتگو

کراچی: شہرِ قائد میں تجاوزات ہٹانے کے معاملے پر سابق گورنر سندھ عشرت العباد نے چیف جسٹس پاکستان اور وزیرِ اعلیٰ سندھ سے رابطہ کیا۔

تفصیلات کے مطابق کراچی میں جاری انسدادِ تجاوزات مہم کے سلسلے میں ڈاکٹر عشرت العباد نے چیف جسٹس ثاقب نثار اور وزیرِ اعلیٰ مراد علی شاہ سے رابطہ کر کے معاملے پر گفتگو کی۔

تجاوزات ہٹانے میں کچھ لوگوں کے ساتھ زیادتی بھی ہوئی ہے۔

عشرت العباد خان سابق گورنر سندھ

سابق گورنر سندھ عشرت العباد نے چیف جسٹس سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ تجاوزات کراچی کا بڑا مسئلہ تھا، تجاوزات کے خلاف سپریم کورٹ کا ایکشن مثبت قدم ہے۔

انھوں نے کہا کہ کراچی میں تجاوزات کی بھرمار سے ٹریفک جام کے مسائل تھے، تاہم تجاوزات ہٹانے میں کچھ لوگوں کے ساتھ زیادتی بھی ہوئی ہے۔

عشرت العباد کا کہنا تھا کہ تجاوزات میں اگر کسی کے ساتھ زیادتی ہوئی ہے تو ازالے کے لیے مانیٹرنگ کمیٹی بنائی جائے، وزیرِ اعلیٰ سندھ، میئر سے مل کر متبادل جگہ فراہم کرنے کے لیے کام کریں۔

دریں اثنا وزیرِ اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کہا کہ سندھ حکومت کسی کے ساتھ زیادتی نہیں ہونے دے گی، جن کے ساتھ زیادتی ہوئی ہے ان کے ساتھ کھڑے ہوں گے۔

خیال رہے کہ وفاقی وزیر بحری امور علی زیدی نے بھی چیف جسٹس سے اپیل کی ہے کہ وہ تجاوزات سے متعلق آپریشن پر ایک کمیٹی تشکیل دیں جو عدالت کو کارروائیوں سے متعلق آگاہ کرتی رہے۔


یہ بھی پڑھیں:  کراچی: انسداد تجاوزات آپریشن، علی زیدی کا چیف جسٹس سے کمیٹی بنانے کا مطالبہ


دوسری طرف وزیرِ اعلیٰ سندھ نے بھی چیف جسٹس سے رابطہ کر کے لیز اور الاٹ شدہ تعمیرات گرائے جانے سے پیدا ہونے والے مسائل کا تذکرہ کیا۔ انھوں نے کہا کہ تجاوزات کے خلاف آپریشن میں قانونی پیچیدگیاں اور انسانی مسائل سامنے آئے ہیں۔

قابلِ فکر امر یہ ہے کہ ایک طرف کراچی میں سپریم کورٹ کے حکم پر تجاوزات اور غیر قانونی تعمیرات کے خلاف آپریشن زور و شور سے جاری ہے، دوسری طرف انتظامیہ عدالتی احکامات کی مزید وضاحت کی ضرورت بھی محسوس کر رہی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں