The news is by your side.

Advertisement

منشیات فروشوں کی گرفتاری، ایکسائز افسر کو جان سے مارنے کی دھمکیاں ملنے لگیں

کراچی: منشیات فروشوں کی گرفتاری پر مبینہ طالبان کمانڈر نے ایکسائزافسرکوجان سےمارنےکی دھمکیاں دینا شروع کردیں ، وسیم خواجہ نے کورنگی سے 2ملزمان گرفتار کرکے منشیات برآمد کی تھی۔

تفصیلات کے مطابق منشیات فروشوں کی گرفتاری ایکسائزافسرکے لیےمصیبت بن گئی ، مبینہ طالبان کمانڈر کی جانب سے ایکسائزافسر کو جان سے مارنے کی دھمکیاں ملنے لگیں۔

دھمکیوں کے پیش نظر اسسٹنٹ ایکسائز افسر وسیم خواجہ نے بوٹ بیسن تھانے میں درخواست دے دی، جس میں کہاگیا کورنگی سے2ملزمان گرفتار کرکے منشیات برآمد کی تھی، ملزمان میں نقیب اللہ اورعبد الوہاب شامل تھے۔

وسیم خواجہ کا کہنا تھا کہ ملزمان کے 2ساتھی میرے دفترمیں آئے، ایک نے اپنا تعارف ایڈووکیٹ قدرت اللہ کے نام سے کرایا، مبینہ جعلی وکیل قدرت اللہ نےسنگین نتائج کی دھمکیاں دیں۔

درخواست میں کہا گیا بلوچستان اور افغانستان کے طالبان کمانڈرز کے نام سے فون کالز آئیں، ملزم نقیب اللہ بدنام زمانہ منشیات فروش اور اسمگلر ریاض کا رشتے دار ہے۔

اسسٹنٹ ایکسائز افسر نے مزیدکہا کہ ملزمان شیریں جناح کالونی سمیت دیگر علاقوں میں منشیات فروشی اور کیماڑی،کلفٹن ہندوپاڑہ اورپوش علاقوں میں بھی منشیات سپلائی کرتے ہیں جبکہ ملزم نقیب اللہ کلفٹن کے رہائشی پروجیکٹ پر بطور سپروائزر کام کر رہا تھا۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں