The news is by your side.

Advertisement

ٹیکسٹائل سیکٹر کو200 ارب روپے کا پیکج دینے کا امکان

اسلام آباد : ملکی برآمدات میں کمی کے باعث ٹیکسٹائل سیکٹر مشکلات کا شکار ہوگیا ہے، جس کے بعد حکومت نے اقدامات شروع کر دیئے، جس کے مطابق حکومت کی جانب سے ٹیکسٹائل سیکٹر کیلئے دوسو ارب روپے کا پیکج متوقع ہے۔

وزیرتجارت خرم دستگیر کے مطابق دو سوارب روپے کے پیکج کو ٹیکسٹال سیکٹر میں جدت اور بحالی کیلئے استعمال کیا جائے گا، حکومت ٹیکسٹائل سیکٹر میں نئی ٹیکنالوجی متعارف کروانے کیلئے پر عزم ہے۔

انھوں نے مزید کہا کہ کپاس کی پیداوار بہتر بنانے کیلئے بھی اقدامات کئے جائیں گے ۔

واضح رہے کہ ملکی برآمدات میں مسلسل کمی کا رجحان دیکھا جارہا ہے رواں مالی سال کی پہلی سہ ماہی میں برآمدات میں نو فیصد کی کمی ریکارڈ کی گئی جبکہ اکتوبر میں پاکستان نے ایک ارب ڈالر سے زائد ٹیکسٹائل مصنوعات برآمد کی تھیں۔


مزید پڑھیں : برآمدات میں کمی،تجارتی خسارے میں اضافہ


یاد رہے کہ ادارہ شماریات کی رپورٹ کے مطابق ملکی برآمدات میں کمی آئی ہے اور ستمبر 2016 کے دوران ستمبر 2015 کے مقابلے میں ملکی برآمدات میں 10.6 فیصد کمی ریکارڈ ہوئی، جولائی تا ستمبر کے دوران درآمدات پونے گیارہ فیصد اضافے کے بعد 11 ارب 75 کروڑ ڈالر رہیں جو کہ گزشتہ سال اسی مدت کے دوران 10 ارب 90 کروڑ ڈالر تھیں۔

ادارہ شماریات کا کہنا ہے کہ رواں مالی جولائی تا ستمبرکے دوران اب تک ملکی برآمدات میں 9 فیصد تک کمی واقع ہوئی ہے۔

خیال رہے کہ گذشتہ ماہ بھی اس حوالے سے رپورٹس سامنے آئی تھیں کہ ملکی برآمدات بڑھانے کے مختلف اقدامات کے لیے6 ارب روپے کے فنڈز کے اجرا کا عمل تعطل کا شکار ہوگیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں