The news is by your side.

Advertisement

پاکستان کی دہشتگردی سے متعلق امریکی رپورٹ پر اظہار مایوسی

اسلام آباد: پاکستان نے امریکی اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کی دہشتگردی سے متعلق رپورٹ پر اظہار مایوسی کرتے ہوئے کہا ہے کہ رپورٹ میں القاعدہ کےخاتمےکیلئے پاکستان کے کردار کو نظر انداز کیا گیا۔

ترجمان دفتر خارجہ نے امریکی اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کی دہشتگردی کے حوالے سے جاری رپورٹ کو پاکستان کی کوششوں سے متعلق تضادات پرمبنی قرار دے دیا۔

رپورٹ پر ردعمل دیتے ہوئے ترجمان دفتر خارجہ نے کہا کہ امریکی اسٹیٹ ڈیپارٹمنٹ کی دہشتگردی سے متعلق رپورٹ پر مایوسی ہوئی، امریکی رپورٹ پاکستان کی کوششوں سےمتعلق تضادات پرمبنی ہے۔

ترجمان نے کہا کہ رپورٹ میں القاعدہ کےخاتمے کیلئے پاکستان کےکردار کو نظرانداز کیا گیا، امریکا پاکستان میں دہشتگردی کے واقعات میں کمی کو تسلیم کرتا ہے۔

ترجمان دفتر خارجہ کا کہنا ہے کہ رپورٹ میں پاکستان کےانسداد دہشتگردی آپریشنز کو بھی نظر انداز کیا گیا، رپورٹ افغان امن عمل کیلئےپاکستان کی کوششوں تسلیم نہیں کرتی جب کہ امریکا طالبان مذاکرات کیلئےپاکستان کی کوششوں کودنیانےتسلیم کیا۔

قبل ازیں ترجمان دفتر خارجہ نے میڈیا بریفنگ کے دوران مقبوضہ کشمیر میں نوجوانوں کی ماورائے عدالت ہلاکتوں کی شدید مذمت کی۔

عائشہ فاروقی کا کہنا تھا کہ لائن آف کنٹرول پر بھارتی خلاف ورزیاں مسلسل جاری ہیں،بھارتی فوج مسلسل شہری آبادی کو نشانہ بنا رہی ہے،بھارت کی حالیہ کارروائیاں مقبوضہ کشمیر میں ظلم و ستم سے توجہ ہٹانے کی کوشش ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں