The news is by your side.

Advertisement

فیصل واؤڈا نااہلی کیس، عدالت نے تحریری فیصلہ جاری کردیا

اسلام آباد ہائی کورٹ نے تحریک انصاف کے رہنما اور سابق وفاقی وزیر برائے آبی وسائل فیصل واؤڈا کے خلاف نااہلی کیس کا تحریری فیصلہ جاری کردیا۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس عامر فاروق نے فیصل واؤڈا نااہلی کیس کا فیصلہ تحریر کیا جو 13 صفحات پر مشتمل ہے۔

عدالت کی جانب سے جاری ہونے والے تحریری فیصلے میں لکھا گیا ہے کہ فیصل واؤڈا کا بیان حلفی بادی نظر میں جھوٹا ہے۔

اسلام آباد ہائی کورٹ نے نااہلی کیس الیکشن کمیشن کو بھیجتے ہوئے ہدایت کی کہ الیکشن کمیشن آف پاکستان سپریم کورٹ کے حالیہ فیصلے کے تناظر میں نااہلی کیس کو سُن کر فیصلہ جاری کرے۔

عدالت کی جانب سے جاری ہونے والے تحریری فیصلے میں لکھا گیا ہے کہ ’فیصل واؤڈا کے مستعفی ہونے کے باعث انہیں نااہل قرار نہیں دیا جاسکتا، انہوں نے الیکشن کمیشن میں جو بیانِ حلفی جمع کرایا وہ بظاہر جھوٹا ہے‘۔

مزید پڑھیں: فیصل واوڈا نے قومی اسمبلی کی رکنیت سے استعفیٰ دےدیا

اسلام آباد ہائی کورٹ کی جانب سے جاری ہونے والے تحریری فیصلے میں لکھا گیا ہے کہ جھوٹا بیان حلفی جمع کرانے پر الیکشن کمیشن آف پاکستان فیصل واؤڈا کے نااہلی کیس کا فیصلہ کرے۔

دوسری جانب سندھ سے سینیٹ کی جنرل نشست پر فیصل واؤڈا کامیاب ہوگئے ہیں۔ واضح رہے کہ آج صبح فیصل واؤڈا نے قومی اسمبلی میں سینیٹ ووٹ کاسٹ کرنے کے بعد اسمبلی رکنیت سے استعفیٰ دیا اور پھر اسے ہائی کورٹ میں جمع کرادیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں