The news is by your side.

Advertisement

کراچی میں فیکٹریوں کو پانی ملتا ہے لیکن عوام کو نہیں: فیصل واوڈا

کراچی: وزیر برائے آبی وسائل فیصل واوڈا کا کہنا ہے کہ کراچی کے مسائل حل کرنے کے لیے کمیٹی بنا دی ہے، فیکٹریوں کو پانی ملتا ہے لیکن عوام کو نہیں ملتا۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر برائے آبی وسائل فیصل واوڈا اور صوبائی وزیر ناصر حسین شاہ کی ملاقات ہوئی۔ فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ تمام جماعتوں کو مل کر کراچی کی بہتری کے لیے کام کرنا چاہیئے، ماضی میں وفاق کی جانب سے صوبوں کو فنڈز نہیں دیے گئے۔

فیصل واوڈا کا کہنا تھا کہ ناامیدی کفر ہے میں نہیں پھیلانا چاہتا، بہت ساری چیزوں میں نا امید ہو چکے ہیں۔ سندھ حکومت میرے حلقے کی عوام کو ریلیف دے۔ فیکٹریوں کو پانی ملتا ہے لیکن عوام کو نہیں ملتا۔

انہوں نے کہا کہ ناصر شاہ سے آج بلدیہ کے مسائل پر بات چیت ہوئی، ناصر شاہ کو کہا کہ تمام اسٹیک ہولڈرز کو ساتھ چلنا چاہیئے۔ ایک دوسرے کے مینڈیٹ کا احترام کرتے ہیں، 35 سال کا مسئلہ ہے ایک دوسرے سے سیاسی اختلاف بھی ہے۔ اختلافات کے باوجود ہمیں ساتھ چلنا ہے۔

فیصل واوڈا نے مزید کہا کہ بد انتظامی میں ملوث لوگوں کے خلاف ناصر شاہ نے ایکشن لیا۔ کراچی کے مسائل حل کرنے کے لیے کمیٹی بھی بنا دی ہے۔

صوبائی وزیر ناصر حسین شاہ کا کہنا تھا کہ ہماری ترجیح عام لوگوں کے مسائل حل کرنا ہے، مراد علی شاہ وزیر اعلیٰ اور سندھ حکومت پیپلز پارٹی کی ہی رہے گی۔ کراچی میں کچرے اور پانی کے مسائل موجود ہیں۔

انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ کو پارٹی قیادت نے مسائل حل کرنے کی ہدایت کی ہے، محرم کے بعد وزیر اعلیٰ سندھ خود معاملات کو حل کریں گے۔ کراچی خوبصورت ہے بدقسمتی سے اس کی غلط تصویر دکھائی جا رہی ہے۔

ناصر شاہ نے کہا کہ کراچی کے ٹرانسپورٹ کے مسائل حل کرنے کے لیے کام کر رہے ہیں، گرین لائن منصوبے پر ہم پر تنقید ہوتی ہے۔ نواز حکومت نے منصوبے کا انفرا اسٹرکچر ہی مکمل نہیں کیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں