The news is by your side.

Advertisement

ڈاکوؤں سے لڑائی میں‌ جاں‌ بحق گارڈ کو خالی بندوق دینے کا انکشاف

فیصل آباد: تن تنہا ڈاکوؤں سے لڑائی کے دوران جاں بحق ہونے والے سیکیورٹی گارڈ سے متعلق انکشاف ہوا ہے کہ سیکیورٹی کمپنی نے گارڈ کو بغیر گولیوں والی بندوق تھمادی تھی۔

یہ انکشاف گارڈ نادر کے بیٹے نے کیا، بیٹے نے سیکیورٹی کمپنی کی پول کھولتے ہوئے کہا کہ میرے والد کو دی گئی بندوق میں اگر ایک بھی گولی ہوتی تو میرا والد ڈاکوؤں کو جانے نہیں دیتا اور یہ بندوق چلنے کے قابل بھی نہیں تھی۔

نادر کے قتل کے بعد سے اہل خانہ غم سے نڈھال ہیں جبکہ پولیس خانہ پری کے لیے ان کے گھر آئی اور سیکیورٹی کمپنی کے خلاف کوئی کارروائی یا تفتیش کرنے کی زحمت نہیں کی، انتظامیہ کا بھی کوئی رکن تعزیت کے لیے نہیں آیا۔

بیٹے نے شکوہ کیا کہ حکومت کا کوئی افسر اس واقعے کے بعد یہاں نہیں آیا، مرحوم کی بیوہ نے کہا کہ ہمارے ساتھ انصاف کیا جائے اور ہماری مدد کی جائے۔

واضح رہے کہ فیصل آباد کے علاقے جڑانوالہ روڈ پر گارڈ نادر سیکیورٹی کمپنی کی جانب سے تعینات تھا کہ وہاں ڈکیتی پڑ گئی، ڈاکوؤں نے گارڈ کا اسلحہ چھیننے کی کوشش کی ، اسے ڈرانے کے لیے اس کے پاؤں کے پاس فائر بھی کیا لیکن گارڈ نے اسلحہ نہ چھوڑا اور ایک ڈاکو کو دبوچ لیا جس پر دوسرے ڈاکو نے گارڈ پر فائرنگ کردی۔

لڑائی کے دوران گن نہ چلنے پر نادر نے لاٹھی کی طرح بھی گن کو استعمال کیا اور ہمت نہ ہاری اور جان دے دی۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں