The news is by your side.

Advertisement

طاقت کے نشے میں بد مست سرکاری افسر کا چوکیدار پر بہیمانہ تشدد

فیصل آباد : ایف ڈی اے کےڈپٹی ڈائریکٹرنے معمرچوکیدارکو تھپڑمارڈالے، چوکیدار کا قصور صرف یہ تھا کہ اس نے اپنے صاحب کو گاڑی پارکنگ ایریا میں کھڑی کرنے کا کہا تھا،۔ڈی سی او فیصل آباد نڈپٹی ڈائریکٹر کو معطل کردیا ۔

تفصیلات کے مطابق فیصل آباد ڈیولپمنٹ اتھارٹی کےڈپٹی ڈائریکٹر خالد حمید دس بجکر ستاون منٹ پر سرکاری گاڑی میں آفس تشریف لائے۔

گاڑی سےاترےہی تھے کہ بزرگ چوکیدار نذیرنے کہا کہ صاحب گاڑی پارکنگ میں کھڑی کردیں، اتناسنناتھاکہ سرکاری افسر گصے میں آپےسےباہرہوگیا۔

باپ کی عمر کے شخص کو الٹے گال پر سیدھے ہاتھ کا زوردار تھپڑ دے مارا،ایک تھپڑسےغصہ ٹھنڈا نہ ہواایک اور۔تھپڑ جڑدیا،طاقت کےنشےمیں چور افسرنےیہیں بس نہیں کیا بزرگ چوکیدارکو دھکےبھی مارے،۔

معمرچوکیدارکوبےعزت ہوتادیکھ کرٹی ایم اےفیصل آباد کے ملازمین نےبچانے کی کوشش مگر ڈپٹی ڈائریکٹر نےتمام ملازمین کو کمرے میں بند کردیا۔

پچاس سالہ چوکیدار نذیر نے حکومت سے انصاف کی فرایمی کا مطالبہ کیاہے۔ جبکہ ملازمین نے ڈپٹی ڈائریکٹر ایف ڈی اے خا لد حمید اس انتہائی نازیبا روّیے کے خلاف احتجاج کیاہے۔

ڈی سی او فیصل آباد نورالامین نے واقعے کا سختی سے نوٹس لے لیا اور مذکورہ ڈپتی ڈائریکتر کو طلب کرکے اس کی سرزنش کی ، بعد ازاں ڈی سی او فیصل آباد نے فیصل آباد ڈیولپمنٹ اتھارٹی کےڈپٹی ڈائریکٹر خالد حمید کو معطل کردیا۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں