The news is by your side.

Advertisement

جعلی اکاؤنٹس کیس: ملزمان سے برآمد رقم صوبائی حکومت کے حوالے

اسلام آباد: نیب نے جعلی اکاؤنٹس کیس میں ملزمان سے ریکور کی گئی رقم سندھ حکومت کے حوالے کردی ہے۔

تفصیلات کے مطابق نیب راولپنڈی نے جعلی اکاؤنٹس کیس میں 8کروڑ14 لاکھ کےچیک سندھ حکومت کےحوالے کئے، چیک سندھ بینک اور نجی بینک نمائندوں کے حوالے کئے گئے۔

اس موقع پر ڈی جی نیب راولپنڈی عرفان منگی نے بتایا کہ جعلی بینک اکاونٹ کیس میں اب تک چودہ بد عنوانی ریفرنس دائر کیے گئے، تیرہ انویسٹی گیشن اور اٹھارہ انکوائریاں کی گئی، ملزمان سے مجموعی طورپر33 ارب روپےسے زائد کی رقم برآمد کی۔

عرفان منگی نے بتایا کہ روشن سندھ پروگرام بدعنوانی مقدمے میں 4.95ملین سندھ حکومت کےحوالے کیےگئے، اومنی گروپ کی بے نامی کمپنی سے37.5 ملین وصول کرکے بینک کےحوالے کئے گئے، اومنی گروپ کیجانب سے نجی بینک سےدھوکا دہی سے قرضہ حاصل کیا گیا تھا۔

ڈی جی نیب راولپنڈی عرفان منگی نے عوام سے اپیل کی کہ وہ غیر قانونی ہاؤسنگ سوسائٹیوں میں سرمایہ کاری سےگریز کریں، نیب کی جانب سے بدعنوانی کےخاتمے کے لئے تمام وسائل بروئے کار لائےجارہےہیں، قانون کے مطابق سب کو اپنےکیےکا جواب دینا ہوگا اور نیب بلا خوف وخطر مگرمچھوں کےخلاف کارروائی جاری رکھےگا۔

دوسری جانب احتساب عدالت نے جعلی اکاؤنٹس کیس میں آصف زرداری کو 29 جون کو طلب کیا ہے، عدالت کی جانب سے سابق صدر کو طلبی کے سمن جاری کئے جاچکے۔

سابق صدر آصف زرداری کے علاوہ ان کے مبینہ فرنٹ مین مشتاق احمد کو بھی عدالت میں طلب کیا گیا ہے، آئندہ سماعت پر سابق صدر کو ریفرنس کی کاپی فراہم کرنے کے بعد فرد جرم کی تاریخ مقرر کی جائے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں