The news is by your side.

Advertisement

جعلی ڈگری پر پنجاب بار کے 15 امیدواروں کے لائسنس معطل

لاہور: چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ نے  بوگس ڈگری کے حامل پنجاب بار کے پندرہ امیدواروں کے لائسنس معطل کردئیے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ محمد قاسم خان نے وکلا کی جعلی ڈگریوں سے متعلق کیس کی سماعت کی، اس موقع پر پنجاب یونیورسٹی کے وکیل کی جانب سے عدالت میں وکلا کی ڈگریوں سے متعلق رپورٹ پیش کی گئی۔

دوران سماعت وکیل پنجاب یونیورسٹی نے عدالت کو آگاہ کیا کہ تمام امیدواروں کا ریکارڈ  یونیورسٹی کے پاس ہے، تاہم یہ صرف ایل ایل بی ڈگری کی حد تک تصدیق کی رپورٹ ہے۔اس موقع پر چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ نے پنجاب بار کے پندرہ امیدواروں کے لائسنس معطل کردئیے، لائسنس معطل کئے جانے والوں میں سابق چیئرمین ایگزیکٹو کمیٹی پنجاب بار کونسل جمیل اصغر بھٹی بھی شامل ہیں، عدالت کی جانب سے ریمارکس دئیے گئے کہ لائسنس معطل ہونے پر امیدواروں کی کامیابی کا نوٹیفکیشن جاری نہیں کیاجائیگا۔

دوران سماعت چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ نے ریمارکس دئیے کہ میں جمہوری نظام کے چلتے رہنے کا قائل ہوں، ڈگریوں کی تصدیق کیلئے چار ماہ تک نتائج کو نہیں روکا جا سکتا، پنجاب کی تمام یونیورسٹیز ڈگریوں کے حوالے سے رپورٹ دیں۔

چیف جسٹس قاسم علی خان نے ریمارکس دئیے کہ کمیشن رجسٹرار کی سربراہی میں تشکیل دے رہا ہوں،امیدوار ساری اسناد اےجی پنجاب کو ایک ہفتے میں جمع کرائیں، رجسٹرار ہائی کورٹ ڈگریاں یونیورسٹی کوبھیجےگا،امیدواروں کیخلاف رپورٹ آئیگی تو ریٹرننگ افسر دوبارہ نوٹیفکیشن جاری کرے گا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں