The news is by your side.

Advertisement

مونا لیزا کی جعلی پینٹنگ لاکھوں ڈالرز میں نیلام

نامور مصور لیونارڈو ڈاؤنچی کی شہرہ آفاق پینٹنگ ’مونا لیزا‘ کی نقل 34 لاکھ ڈالر (53 کروڑ پاکستانی روپے) میں فرانس کے کرسٹی آکشن ہاؤس میں نیلام ہوگئی۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق مونا لیزا کی نقل جسے ’ہیکنگ مونا لیزا‘ کہا جاتا ہے کو آن لائن نیلامی میں دو سے تین لاکھ ڈالر میں فروخت کرنے کا امکان ظاہر کیا گیا تھا لیکن یہ پینٹنگ 10 گنا زیادہ قیمت میں نیلام ہوئی۔

کرسٹی آکششن ہاؤس کے ترجمان نے کہا کہ یہ مونا لیزا کی پینٹنگ سے متعلق ایک نیا ریکارڈ ہے۔

کرسٹی آکشن ہاؤس کے مطابق ریمنڈ ہیکنگ نے اپنی زندگی کا ایک بڑا حصہ اس پینٹنگ کو ڈاونچی کی اصل پینٹنگ ثابت کرنے اور لوور میوزیم میں موجود تصویر کو جعلی قرار دینے میں گزار دیا۔

آکشن ہاؤس کے مطابق ریمنڈ ہیکنگ نے یہ پینٹنگ صرف 4 ڈالرز میں خریدی تھی۔

کرسٹی میں اولڈ ماسٹر پینٹنگز کے انٹرنیشنل ڈائریکٹر نے کہا کہ ‘فن چیلنج کرتا ہے، متوجہ کرتا ہے، کبھی کبھار جنون بن جاتا ہے’۔

نیلام گھر نے کہا کہ ‘یہ کام اور اس کی تاریخ مونا لیزا اور لیونارڈو ڈاونچی سے متعلق برقرار رہنے والی دلچسپی کی عکاسی کرتے ہیں’۔

کرسٹی آکشن ہاؤس نے کہا کہ ‘یہ نقل لوور میوزیم میں موجود پینٹنگ جیسی نہیں ہے لیکن تصویروں کی دنیا کا جادو پیش کرتی ہے، جس میں سے کچھ طاقتور چیزیں ہمارے ذہن میں رہ جاری ہیں اور خواب کو آگے بڑھنے کی اجازت دیتی ہیں۔

Comments

یہ بھی پڑھیں