The news is by your side.

Advertisement

مقبوضہ کشمیر کے سابق وزیراعلیٰ فاروق عبداللہ 7 ماہ بعد رہا

سری نگر: مقبوضہ کشمیر کے سابق وزیراعلیٰ فاروق عبداللہ کو 7 ماہ بعد رہا کردیا گیا۔

غیرملکی خبررساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق مقبوضہ کشمیر کی حکومت نے سابق وزیراعلیٰ فاروق عبداللہ کو 7 ماہ بعد کردیا جس کا نوٹیفکیشن بھی جاری کردیا گیا ہے۔

رہائی کے بعد اپنے گھر کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے فاروق عبداللہ کا کہنا تھا کہ ان کی آزادی تب تک نامکمل ہے جب تک دیگر سیاسی رہنماؤں کو رہا نہیں کیا جائے گا۔

فاروق عبداللہ کا کہنا تھا کہ دیگر رہنماؤں کی رہائی تک کسی سیاسی معاملے پر بات نہیں کروں گا۔

واضح رہے کہ فاروق عبداللہ کے بیٹے عمر عبداللہ اور سابق وزیراعلیٰ محبوبہ مفتی بھی زیر حراست ہیں۔

بھارتی حکومت نے سابق وزیراعلیٰ کو 5 اگست 2019 کو مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کے خاتمے کے بعد حراست میں لیا تھا۔

یاد رہے کہ مودی سرکار نے 5 اگست 2019 کو مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کردی تھی جس کے بعد سے وادی میں مکمل لاک ڈاؤن ہے۔

fb-share-icon0
Tweet 20

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں