لندن سے دھمکیاں مل رہی ہیں، حکومت تعاون کرے، فاروق ستار Farooq sattar
The news is by your side.

Advertisement

لندن سے دھمکیاں مل رہی ہیں، حکومت تعاون کرے، فاروق ستار

کراچی: ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ فاروق ستار نے کہا ہے کہ خواجہ اظہار الحسن پر قاتلانہ حملہ افسوسناک ہے، ہمیں لندن سے دھمکیاں مل رہی ہیں۔ سیکورٹی کا جائزہ لے کر حکومت ہمارے ساتھ تعاون کرے۔

تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ فاروق ستار نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئےکہا کہ عید کے دن خواجہ اظہارالحسن پر حملہ ہونا انتہائی تشویش ناک بات ہے، ہمیں پروٹوکول شوق پورا کرنے کے لیے نہیں چاہیے۔

فاروق ستار نے کہا کہ شہری اور گارڈ کی جانیں بھی اتنی ہی قیمتی ہیں جتنی باقیوں کی، آج اللہ نہ کرے خواجہ اظہار کو کچھ ہوجاتا تو کیا حال ہوتا۔

ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ کا کہنا تھا کہ فائرنگ کا واقعہ کراچی کا امن تباہ کرنے کی سازش ہے، مسلح افواج کے تعاون سے کراچی کی صورت حال بہتر ہوئی۔ انہوں نے کہا کہ صورت حال بہتر ہونے پر کراچی میں عید کچھ بہتر ہوئی ہے۔


یہ پڑھیں: ایم کیو ایم رہنما خواجہ اظہار الحسن قاتلانہ حملے میں بچ گئے، گارڈ جاں بحق


فاروق ستار نے سیکورٹی گارڈ اور شہری کے اہل خانہ سے اظہار تعزیت کرتے ہوئے کہا کہ حکومت کو کیسے ذمہ داری کا احساس دلائیں یہ مل کر سوچنا ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ سیکورٹی کا جائزہ لے کر حکومت کو ہمارے ساتھ تعاون کرنا ہوگا، دیکھنا ہوگا منصوبہ بندی اور سازش کہاں سے ہورہی ہے، لندن سے بھی ملک مخالف بیانات اور ویڈیوز آئی ہیں۔

کراچی میں بارش کے بعد پیدا ہونے والی صورت حال کے حوالے سے ایم کیو ایم پاکستان کے سربراہ کا کہنا تھا کہ حکومت سندھ نے سارا ملبہ میئرکراچی پر ڈال دیا۔ انہوں نے کہا کہ واٹر بورڈ بھی کے ایم سی کے انڈر نہیں جبکہ شہر کو لاوارث بنا کر چھوڑ دیا گیا ہے۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں