The news is by your side.

Advertisement

فواد چوہدری نے سلطنت برطانیہ سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیوں کیا؟

اسلام آباد: وزیر اطلاعات فوادچوہدری نے سلطنت برطانیہ سےمعافی مانگنے کا مطالبہ کر دیا.

تفصیلات کے مطابق وزیراطلاعات نے اپنے ٹویٹ میں کہا کہ وہ اس مطالبے کی حمایت کرتے ہیں کہ سلطنت برطانیہ جلیانوالہ باغ قتل عام اور قحط بنگال پرپاکستان، بھارت اوربنگلا دیش سے معافی مانگے.

انھوں نے مزید کہا کہ برطانیہ کو کوہ نور ہیرا بھی لاہورمیوزیم کو واپس کرنا چاہیے، ساتھ ہی معافی مانگنی چاہیے.

ان واقعات کا پس منظر کیا ہے؟


فواد چوہدری نے جن واقعات پر سلطنت برطانیہ سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیا ہے، انھوں نے اس خطے کی تاریخ پر گہرے اثرات مرتب کیے ہیں.

امرتسر  کے جلیانوالہ باغ میں 13 اپریل 1919 کو قتل عام کا افسوس ناک واقعہ پیش آیا، جب برطانوی فوجی جنرل ڈائر کے احکامات پر دس منٹ تک نہتے لوگوں پر گولیاں برسائی گئیں، اس ہولناک واقعے میں ایک ہزار سے زائد مظاہرین ہلاک ہوئے.

برطانوی دورحکومت میں بنگال میں چاربار خوف ناک قحط پڑا تھا، 1866 کے قحط  بنگال میں لگ بھگ ایک کروڑ سے زائد افراد بھوک کے عفریت کے ہاتھوں مارے گئے، جو کل آبادی کا ایک تہائی تھے۔

اسی طرح کوہ نور کو دنیا کا قیمتی ترین ہیرا سمجھا جاتا ہے. کوہ نور ہیراپنجاب کےسکھ حکمرانوں سے برطانوی سامراج نے چھینا اورملکہ برطانیہ کی ملکیت میں دیا گیا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں