سعودی عرب میں عمران خان کا احترام پاکستان کا مقام ظاہر کرتا ہے، فواد چوہدری
The news is by your side.

Advertisement

سعودی عرب میں عمران خان کا احترام پاکستان کا مقام ظاہر کرتا ہے، فواد چوہدری

ریاض : وزیراطلاعات فواد چوہدری کا کہنا ہے کہ سعودی عرب میں عمران خان کا احترام پاکستان کامقام ظاہرکرتاہے، اب سے کچھ دیربعد وزیراعظم کا کانفرنس میں سوال وجواب کا سیشن ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراطلاعات فواد چوہدری نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے بیان میں کہا سعودی عرب میں عمران خان کا احترام پاکستان کا مقام ظاہر کرتا ہے، عمران خان ریاض میں مصروفیات کےباعث چند گھنٹے ہی سوسکے، مصروفیات سے ظاہر ہے مسلم امہ عمران خان کو کتنی اہمیت دیتی ہے، اب ایک اورمصروف دن وزیراعظم عمران خان کامنتظرہے۔

فوادچوہدری کا ایک اور ٹوئٹ میں کہنا تھا کہ اب سے کچھ دیر بعد وزیر اعظم کا کانفرنس میں سوال وجواب کا سیشن ہے، پھر خادم الحرمین شاہ سلمان اور ولی عہد سے ملاقات ہوگی، سعودی وزرا بھی وزیر اعظم عمران خان سے ملاقات کریں گے، عالمی سرمایہ کاروں سےملاقاتیں بھی وزیر اعظم کی مصروفیات کا حصہ ہیں۔

یاد رہے گذشتہ روز وزیرِ اعظم پاکستان اپنے دو روزہ دورے پر مدینہ منوّرہ پہنچے تو مدینے کے گورنر شہزادہ فیصل بن سلمان نے وزیرِ اعظم کا استقبال کیا، وزیراعظم نے وفد کے ہمراہ مسجد نبوی میں روضہ رسول ﷺپر حاضری دی ، نوافل ادا کئے اور پاکستان اورامت مسلمہ کی ترقی وخوشحالی کیلئے دعا کی۔

مزید پڑھیں : وزیر اعظم عمران خان کی روضہ رسول ﷺپرحاضری، نوافل کی ادائیگی

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی، وزیر خزانہ اسد عمر، وزیر اطلاعات فواد چوہدری، چیئرمین سرمایہ کاری بورڈ ہارون شریف اور مشیر تجارت عبدالزاق داؤد وفد میں شامل ہیں۔

وزیر اعظم عمران خان روضہ رسول ﷺ پر حاضری دینے کے بعد سعودی عرب کے دارالحکومت ریاض پہنچ گئے، سعودی عرب کے دارالحکومت پہنچنے پر وزیراعظم کا استقبال گورنر ریاض اور پاکستانی سفیر نے کیا۔

وزیراعظم عمران خان ریاض میں عالمی سرمایہ کاری کانفرنس میں شرکت کریں گے، جس میں دنیا بھر سے ممتاز کاروباری شخصیات، سرمایہ کار، بڑی کاروباری کمپنیوں اور ہائی ٹیک انڈسٹری کے نمائندگان شرکت کررہے ہیں۔

کانفرنس پاکستانی حکام کو دنیا کے اہم کاروباری رہنماؤں کے ساتھ رابطے کا موقع فراہم کرے گی۔

خیال رہے کہ دفتر خارجہ نے کہا ہے کہ وزیرِ اعظم سرمایہ کاری کانفرنس میں پاکستان میں سرمایہ کاری اور معاشی مواقع پر روشنی ڈالیں گے اور اپنے آئندہ 5 سالہ وژن سے دنیا کو آگاہ کریں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں