The news is by your side.

Advertisement

مولانا فضل الرحمان نے فوری الیکشن کا مطالبہ کردیا

پشاور : سربراہ جمعیت علمائے اسلام (جے یو آئی) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے ملک میں فوری الیکشن کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہمیں فوری طور پر الیکشن چاہیئے۔

مولانا فضل الرحمان نے اپنے جاری کردہ بیان میں کہا کہ اقتدار کو غیر ضروری لمبا کرنا ہمارا مؤقف نہیں، ہمیں فوری طور پر الیکشن چاہیئے، قوم کو امانت واپس کرنا ہماری ذمہ داری ہے۔

سربراہ جے یو آئی کا کہنا ہے کہ انتخابی نظام میں کوئی خامی ہے تو وقتی طور پر اصلاحات کریں، موجودہ اسمبلی کا فائدہ اُٹھائیں اور انتخابی اصلاحات کریں۔

خیال رہے کہ موجودہ حکومت کے اندر جے یو آئی کا اپنا وجود اور موقف ہے۔

دوسری جانب وفاقی کابینہ کی تشکیل کے لئے حکمران اتحاد میں معاملات طے پا گئے، نئی وفاقی کابینہ کے آج حلف اٹھانے کا امکان ہے۔

نومنتخب وزیراعظم شہباز شریف کے حلف اٹھانے کے ایک ہفتے بعد بالآخر نئی وفاقی کابینہ کا آج حلف اُٹھانے کا امکان ہے، پہلے مرحلے میں 10 سے 12 وزراء حلف اُٹھائیں گے۔

ذرائع کے مطابق بلاول بھٹو کو وزیرخارجہ بنائے جانےکا امکان ہے جبکہ حکمران اتحاد کا مرتضیٰ جاوید عباسی کو ڈپٹی اسپیکر بنانے کا امکان ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ حناربانی کھر وزیرمملکت برائےخارجہ امور بنائےجانےکا امکان ہے جبکہ شازیہ مری یا مصطفیٰ نواز کھوکھو کو وزارت انسانی حقوق کا قلمدان دینےکا امکان ہے۔

ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ خواجہ آصف کو وزارت تجارت کا قلمدان سوپنے جانےکا امکان ہے جبکہ مفتاح اسماعیل کو مشیر خزانہ بنائے جانے کا امکان ہے۔

ذرائع کے مطابق مریم اورنگزیب کو وزارت اطلاعات ونشرزیات کا قلمدان دینےکا امکان ہے جبکہ رانا تنویر کو وزارت پارلیمانی امور سونپے جانےکا امکان ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ رانا ثناءاللہ کو وفاقی وزارت داخلہ کا قلمدان دینےکا امکان ہے۔

ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ شاہد خاقان عباسی نے کسی وزارت کا قلمدان لینے سے معذرت کر لی ہے، تاہم وہ بغیر قلمدان توانائی کے امور دیکھیں گے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں