The news is by your side.

Advertisement

وفاقی کابینہ کا مصنوعی مہنگائی کرنے والوں پر کڑی نظر رکھنے کا فیصلہ

حکومت کا  ذخیرہ اندوزوں کے خلاف کارروائی اور ادویہ کی قیمتیں کم کرنے کا اعلان

اسلام آباد: معاون خصوصی برائے اطلاعات و نشریات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ وفاقی کابینہ نے مصنوعی مہنگائی کرنے والوں پر کڑی نظر  رکھنے کا فیصلہ کیا ہے.

ان خیالات کا اظہار انھوں نے کابینہ اجلاس کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا. ان کا کہنا تھا کہ آج کابینہ میں نئے آنے والے وزرا کو وزیراعظم نے مبارک باد دی اور کابینہ کو دورہ ایران سے متعلق آگاہ کیا.

انھوں نے کہا کہ ایران ہمارا برادر ملک ہے، دونوں ملکوں میں غلط فہمیوں کا تدارک ضروری تھا، پاکستان، ایران کو مل کر تجارتی روابط مضبوط کرنا ہوگا، موجودہ حالات کے تناظر میں قومی ذمہ داریاں بڑھ گئی ہیں، وزیراعظم کاآئندہ دورہ چین کا ہے، وزیراعظم چین میں آزادتجارتی معاہدے پر دستخط کریں گے.

عن قریب تمام اسٹیک ہولڈرزسے مل کر دواؤں کی قیمتیں کم کریں گے

فردوس عاشق اعوان

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ دواؤں کی قیمتوں میں اضافے سے ملک میں غیریقینی صورتحال ہے، دوائیں مڈل کلاس کی پہنچ سے دور ہوگئی ہیں، عن قریب تمام اسٹیک ہولڈرزسے مل کر دواؤں کی قیمتیں کم کریں گے، ایل این جی پرماضی کے معاہدوں سے کابینہ کو آگاہ کیا گیا، قوم سے ایل این جی کے نام پر فراڈ ہوا، ایل این جی کے نئے معاہدے شفاف طریقے سے ہوں گے، چین سے سی پیک کے امور پر بات چیت ہوگی.

معاون خصوصی نے کہا کہ رمضان قریب ہیں، اس دوران مصنوعی مہنگائی کی جاتی ہے، مصنوعی مہنگائی کرنے والے عناصر پر نظر رکھنے کا فیصلہ ہوا ہے، پارلیمنٹ میں وزرا کی حاضری یقینی بنانے پربات چیت ہوئی، ذخیرہ اندوزوں پر کڑی نظر رکھنےکا فیصلہ کیا گیا ہے، وزیر اعظم نے ہدایت کی کہ وزرا عوامی مفاد میں پالیسیاں بنائیں۔

مزید پڑھیں: بلاول نے کرپشن کے پیسے پر آکسفورڈ یونیورسٹی میں داخلہ لیا، فردوس عاشق اعوان

انھوں نے کہا کہ وزیر اعظم کو عوام کا احساس نہ ہوتا، تو قریبی ساتھی کو کیوں ہٹاتے؟ ہمیں اپنے مفادات کے بجائے پاکستان کا مفاد ہرحال میں عزیز ہے، وسیع تجربہ کار افراد کو ذمہ داریاں معاملات بہتر کرنے کے لئے دی گئیں، اقتصادی صورتحال سنبھالنے کے لئے دوست ممالک کی مدد لی گئی، 1200ارب کا خسارہ گزشتہ حکومت چھوڑ کر گئی تھی.

انھوں نے کہا کہ عمر ایوب کو وزارت پیٹرولیم کا چارج دیا گیا ہے، گیس بلز اضافی چارجز سے متعلق جلد آگاہ کریں گے، ٹیکس ایمنسٹی اسکیم کےاعتراضات کو دور کیا جا رہا ہے، گزشتہ اسکیم میں بلیک منی وائٹ کی گئی، مگرپیسہ واپس نہیں آیا.

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں