The news is by your side.

Advertisement

شہباز شریف کو بیرون ملک جانے کی اجازت، وفاقی حکومت نے لاہور ہائی کورٹ کا فیصلہ چیلنچ کردیا

اسلام آباد: وفاقی حکومت نے شہباز شریف کو بیرون ملک جانے کی اجازت دینے کا فیصلہ سپریم کورٹ چیلنچ کردیا ، جس میں اپیل پر فیصلے تک لاہور ہائی کورٹ کا فیصلہ معطل کرنے کی استدعا کی گئی ہے۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت نے شہباز شریف کوبیرون ملک جانے کی اجازت دینے کے معاملے پر لاہور ہائی کورٹ کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل دائرکردی ، اپیل آئین کے آرٹیکل 185 تھری کے تحت دائر کی گئی۔

وفاقی حکومت کی جانب سے اپیل میں 12 قانونی سوالات اٹھائے گئے ، اپیل پر فیصلے تک لاہور ہائی کورٹ کا فیصلہ معطل کرنے کی استدعا کرتے ہوئے کہا گیا ہے کہ شہباز شریف کا نام بلیک لسٹ سے نکالنے کا حکم کالعدم قرار دیا جائے۔

درخواست میں کہا گیا کہ لاہور ہائیکورٹ کا حکم قانون کی نظر میں برقرار نہیں رکھاجا سکتا، لاہور ہائی کورٹ نے متعلقہ حکام سے نہ کوئی جواب مانگا نہ کوئی رپورٹ اور بیرون ملک جانے کی اجازت دینے کا یکطرفہ فیصلہ نہیں دیا جا سکتا۔

وفاقی حکومت نے کہا کہ شہباز شریف کے واپس آنے کی کوئی گارنٹی نہیں، شہباز شریف نوازشریف کی واپسی کےبھی ضامن ہیں جبکہ ان کی اہلیہ، بیٹا، بیٹی اور داماد پہلے ہی مفرور ہیں۔

یاد رہے لاہور ہائی کورٹ نے طبی بنیادوں پر شہباز شریف کو دو ماہ کے لئے بیرون ملک جانے کی اجازت دی تھی اور کہا تھا کہ شہباز شریف کو باہر جانے کی مشروط اجازت آٹھ مئی سے پانچ جولائی تک ہوگی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں