The news is by your side.

Advertisement

سانحہ مچھ کے لواحقین کا حکومت سے معاوضہ چیک کے بجائے نقد ادا کرنے کا مطالبہ

اسلام آباد : سانحہ مچھ کے لواحقین نے حکومت سے معاوضہ چیک کے بجائے نقد ادا کرنے کا مطالبہ کردیا، جس کے باعث حکومت کو دشواری کا سامنا ہے کیونکہ رولزکے مطابق وفاقی حکومت معاوضہ نقد ادا نہیں کرسکتی۔

تفصیلات کے مطابق وفاقی حکومت کو سانحہ مچھ کے لواحقین کو معاوضہ دینے میں دشواری کا سامنا ہے ، وزیرداخلہ شیخ رشید نے معاوضہ چیک میں دینے کی پیشکش کی مگر لواحقین نے نقد ادائیگی کا مطالبہ کردیا۔

ذرائع لواحقین کا کہنا ہے کہ جاں بحق ہونیوالے 70 فیصد افغانی ہیں جن کے بینک اکاؤنٹس نہیں تاہم رولز کے مطابق وفاقی حکومت معاوضہ نقد ادا نہیں کرسکتی ، کیش دینے کے لیے رولزمیں تبدیلی صوبائی حکومت کوکرنا ہوگی۔

گذشتہ روز وزیراعظم عمران خان نے اپنے بیان میں کہا کہ مچھ واقعے کے لواحقین سے درخواست کی تھی اپنے پیاروں کی تدفین کریں، آپ کادردسمجھتاہوں ، ہزارہ برادری کو یقین دلاتاہوں ان کے دکھ اور مطالبات کااحساس ہے۔

عمران خان کا کہنا تھا کہ پہلے بھی چل کرآپ کے پاس آیا تھا اور دکھ میں ساتھ کھڑاتھا، بہت جلدکوئٹہ آکرشہداکےلواحقین سےتعزیت اور فاتحہ خوانی کروں گا، کبھی اپنےعوام کابھروسہ نہیں توڑوں گا۔

یاد رہے وزیرداخلہ شیخ رشید نے وفاقی کابینہ کو صورتحال سے آگاہ کیا تھا، وفاقی کابینہ کا سانحہ مچھ پر افسوس کا اظہار کیا اور وزیراعظم عمران خان سمیت کابینہ اراکین نے جاں بحق افراد کیلئے دعا کی تھی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں