The news is by your side.

Advertisement

نواز شریف سے مشاورت کیلیے وزیراعظم لندن جارہے ہیں، مریم اورنگزیب

وفاقی وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب نے کہا ہے کہ وزیراعظم شہباز شریف اور  ن لیگ کا پارٹی وفد لندن جارہا ہے جو وہاں نواز شریف سے مشاورت کرے گا۔

اے آر وائی نیوز کے مطابق وفاقی کابینہ کے اجلاس کے بعد پریس کانفرنس کرتے ہوئے وزیر اطلاعات مریم اورنگزیب نے کہا کہ وزیراعظم شہباز شریف لندن جا رہے ہیں اور سیاسی بیروزگار یاد رکھیں کہ ن لیگ کا پارٹی وفد بھی جارہا ہے جو لندن میں نواز شریف سے مشاورت کرے گا اور سیاسی جماعتوں میں مشاورت معمول کی بات ہے، لیکن جن کے پاس کچھ دکھانے کو نہیں ہے ان کو بات کرنے کیلیے موضوع مل گیا، ہم وہ کریں گے جو پاکستان کےعوام کے حق میں بہتر ہوگا۔

وزیر اطلاعات نے کہا کہ عمران خان کی سازش کو پنجاب میں دہرانے کی کوشش جاری ہے، آئین شکنی کرکے اختیارات کا ناجائز استعمال کیا جارہا ہے جو کہ غنڈہ گردی ہے، سیاسی بے روزگار سودا بیچ رہے ہیں، وزارت قانون کو ہدایت کی گئی ہے کہ اس کا سدباب کیا جائے کہ آئندہ کوئی ایسا کرنے کی جرات نہ کرسکے، وفاقی حکومت اسلام آباد ہائی کورٹ کے نوٹس پر جواب دے گی۔

ان کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی کی کارکردگی کا صفحہ خالی ہے اس لیے جعلی خط لہرا رہے ہیں اگر ایک بھی چیز کارکردگی دکھانے کے لیے ہوتی تو انہیں جھوٹا سازشی خط نہیں لانا پڑتا۔

مریم اورنگزیب نے مزید کہا کہ گزشتہ حکومت نے کارٹیلز اور مافیا کے ذریعے عوام کو لوٹا لیکن موجودہ حکومت کا پلان عوام کو ریلیف دینے کا ہے، وفاقی کابینہ کے اجلاس میں متعدد فیصلے کیے گئے ہیں، اس حوالے سے وزیراعظم حالات کا جائزہ لے کر بہت جلد قوم سےخطاب کریں گے جس میں عوام کی بہتری کے لیے پیکیج کا اعلان ہوگا۔

ان کا کہنا تھا کہ ہم نے 3 ہفتے کے دوران 3 ضروری اشیا کے حوالے سے پرائس میکا نزم بنایا گیا ہے اور پہلی بار پہلی بارصوبوں کے ساتھ مل کر ایک طریقہ کار وضع کیا گیا ہے کہ قیمتوں کو کس طرح وفاق اور صوبوں میں مانیٹر کیا جائے، انہوں نے بتایا کہ کابینہ میں اقتصادی رابطہ کمیٹی کے اجلاس کی توثیق کی گئی ہے، ای سی سی نے آٹے کا 20کلوکا تھیلہ950 سے 800 کرنے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ چینی کی قیمت75 روپے مقررکی گئی تھی جس کو کابینہ نے برقرار رکھا ہے۔

مریم اورنگزیب نے کہا کہ گزشتہ ادوارمیں جب چینی ایکسپورٹ ہوئی تو مصنوعی قلت کی گئی، پہلے چینی ایکسپورٹ کی گئی پھر اسے امپورٹ کیا گیا لیکن ملک میں اس وقت ڈیمانڈ کے مطابق چینی موجود ہے اور وزیراعظم نے چینی کی ایکسپورٹ پر مکمل پابندی لگادی ہے اور ہماری کوشش ہے کہ چینی کی قیمت کو واپس عوام کی پہنچ تک لایا جائے۔

وفاقی وزیر کا یہ بھی کہنا تھا کہ وزیراعظم نے وزارت فوڈ سیکیورٹی کو ہدایت جاری کردی ہیں، گندم کی پیداوار میں اضافے کیلئے اقدامات کی ہدایات کی گئی ہیں اور کابینہ نے 10 ملین ٹن گندم منگوانے کی منظوری دی ہے جب کہ ایک سے زائد غیر ملکی پاسپورٹ منسوخ کرنے کی بھی منظوری دی ہے، وفاقی کابینہ نے چیئرمین واپڈا کے استعفے اور فواد اسد اللہ خان کو ڈی جی آئی بی تقرری کی منظوری بھی دی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں