The news is by your side.

Advertisement

‘الیکشن کمیشن کے باہر احتجاج کا مقصد آئینی ادارے پر دباؤ ڈالنا ہے’

وفاقی وزیر برائے ماحولیاتی تبدیلی سینیٹر شیری رحمٰن نے کہا ہے کہ پی ٹی آئی کی جانب سے الیکشن کمیشن کے باہر احتجاج کا مقصد آئینی ادارے پر دباؤ ڈالنا ہے۔

وفاقی وزیر برائے ماحولیاتی تبدیلی سینیٹر شیری رحمٰن نے پی ٹی آئی کے الیکشن کمیشن کے باہر احتجاج کو آئینی ادارے پر دباؤ ڈالنے کے مترادف قرار دیا ہے اور کہا ہے کہ آئینی اداروں کو این آر او لینے کیلئےمتنازعہ بنانا قابل مذمت ہے۔

وفاقی وزیر نے کہا کہ تحریک انصاف نے اگر ممنوعہ فنڈنگ نہیں لی تو پھر ڈر کس بات کا ہے؟ سازش کا الزام امریکا پر لگاتے ہیں اور احتجاج الیکشن کمیشن کے باہر کرتے ہیں۔

وفاقی وزیر نے مزید کہا کہ موجودہ چیف الیکشن کمشنر کو تحریک انصاف نے خود نامزد کیا تھا اب کہتے ہیں کہ چیف الیکشن کمشنر کا نام کہیں اور سےآیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ عمران خان کارکنان اور ووٹرز کو بیانیےکی آڑ میں گمراہ کر رہے ہیں، وہ فارن فنڈنگ کیس میں این آر او کیلیے احتجاج کر رہےہیں۔

مزید پڑھیں: پی ٹی آئی کا آج الیکشن کمیشن کے باہر احتجاج ہوگا

واضح رہے کہ پی ٹی آئی نے الیکشن کمیشن کے مبینہ متعصبانہ رویے کیخلاف آج ملک بھر میں الیکشن کمیشن کے دفاتر کے باہر احتجاج کا اعلان کررکھا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں