site
stats
پاکستان

شریف خاندان کی کمپنیوں سے متعلق ریکارڈ تبدیل کیا گیا: ایف آئی اے

FIA PANAMA CASE

اسلام آباد: ایف آئی اےنےپاناما کیس میں ایس ای سی پی کےریکارڈ میں تبدیلی کا الزام درست قراردےدیا‘ چوہدری شوگرملز کے ریکارڈ میں ردوبدل کی گئی۔

تفصیلات کے مطابق سپریم کورٹ آج ایف آئی اے کی جانب سے پیش کردہ رپورٹ کا جائزہ لے گی جس میں چیئرمین ایس ای سی پی ظفر الحق حجازی کےخلاف مقدمہ درج کرنے کی سفارش بھی کردی گئی ہے۔

یاد رہے کہ پاناما کیس کی تحقیقات کے لیے قائم کی جانے والی مشترکہ تحقیقاتی کمیٹی بھی آج سپریم کورٹ میں اپنے رپورٹ جمع کرائے گی جبکہ ایف آئی اے کی جانب سے رپورٹ جمع کرادی گئی ہے۔

ایف آئی اے نےسپریم کورٹ میں جمع کرائی رپورٹ میں تصدیق کر دی ہےکہ ایس ای سی پی کےچیئرمین ظفرالحق حجازی نے چوہدری شوگرملزکی انکوائری رپورٹ میں تبدیلی کرائی‘ مقدمہ درج کیاجائے۔


جےآئی ٹی آج رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرائے گی


رپورٹ میں کہا گیا کہ ظفرحجازی نےماتحت عملے پردباؤ ڈال کرریکارڈ میں ردوبدل کرایا۔ ڈائریکٹر ماہین فاطمہ اورافسرعلی عظیم اکرم کے خلاف بھی غیرقانونی کام کرنے پر کارروائی کی جائے۔

ماہین فاطمہ نے جے آئی ٹی میں پیشی پر اعتراف کیا تھا کہ چیئرمین کے حکم پر ریکارڈ میں ردوبدل کی گئی۔ایف آئی اے نے چیئرمین اورمتعلقہ افسروں پرفوجداری مقدمہ چلانےکی سفارش کی ہے۔

ایف آئی اےکی اٹھائیس صفحات پرمشتمل انکوائری رپورٹ میں شریف خاندان کی کمپنیوں سےمتعلق ریکارڈ میں ردوبدل کی تصدیق کی گئی ہے۔۔ پچیس جون دو ہزار سولہ کو اے آر وائی نیوز کے اینکر ارشد شریف نے اپنے پروگرام پاور پلے میں شریف خاندان کی منی لانڈرنگ کا انکشاف کیا تھا۔

پاناما جے آئی ٹی نےبارہ جون کو چوہدری شوگر ملز سے متعلق ریکارڈ کی ٹمپرنگ کے الزامات کی رپورٹ سپریم کورٹ میں جمع کرائی تھی، جس پر سپریم کورٹ نے ایف آئی اے کو تحقیقات کا حکم دیاتھا۔


اگرآپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اوراگرآپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پرشیئرکریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top