کار سرکار میں مداخلت، لیگی رکن اسمبلی کے خلاف مقدمہ درج pmln-mpa
The news is by your side.

Advertisement

کار سرکار میں مداخلت، ن لیگی رکن اسمبلی پر مقدمہ درج

فیصل آباد : الائیڈ اسپتال میں سیکیورٹی گارڈ کو تشدد کا نشانہ بنانے اور توڑ پھوڑ کرنے والے نون لیگی ایم پی اے شعیب ادریس کے خلاف بالآخر مقدمہ درج کرلیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق الائیڈ اسپتال میں ہنگامہ آرائی کرنے اور توڑ پھوڑ کرنے پر مسلم لیگ (ن) کے رکن صوبائی اسمبلی شعیب ادریس اور ان کے ساتھیوں کے خلاف مقدمہ سوشل میڈیا پر پڑنے والے دباؤ کے سبب تھانہ سول لائنز میں درج کرلیا گیا ہے۔

ذرائع کے مطابق حکمران جماعت مسلم لیگ (ن) کے رکن صوبائی اسمبلی شعیب ادریس اور دیگر پندرہ ساتھیوں پر پانچ مختلف دفعات عائد کی گئی ہیں جن میں کارِ سرکار میں مداخلت، سرکاری املاک کو نقصان پہنچانے، ہنگامہ آرائی، اسلحے کی نمائش اور اسلحہ چھیننے کا الزام عائد کیاگیاہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ مقدمہ الائیڈ اسپتال کے سیکیورٹی سپروائزر شبیر حسین کی درخواست پر درج کیا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ نو اپریل کی رات نون لیگی ایم پی اے شعیب ادریس تین گاڑیوں پر پندرہ مسلح افراد کے ساتھ آئے اور ایمرجنسی کے سامنے گاڑیاں پارک کرنے سے روکنے پر شعیب ادریس نے گارڈ سے بدتمیزی کی

سیکیورٹی سپروائزر شبیرحسین نے درخواست میں موقف اختیار کیا کہ لیگی رکن اسمبلی شعیب ادریس نے سکیورٹی گارڈ شاہد پر تشدد کیا اورجاتے ہوئے دوگارڈز سے اسلحہ چھین کر اپنے ہمراہ لے گئے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں