The news is by your side.

Advertisement

پہلی بار کسی وزیراعظم نے عوامی مفاد کیلئے کابینہ میں تبدیلی کی، فردوس عاشق اعوان

اسلام آباد : مشیر اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ پہلی بار کسی وزیراعظم نے عوامی مفاد کیلئے وفاقی کابینہ میں تبدیلی کی، تبدیلی اچھی ہوتی ہے ہچکچانا نہیں چاہیے، کچھ وزیراعظم چور دروازے سے تبدیل ہوئے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام اعتراض ہے میں میزبان عادل عباسی سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

مشیر اطلاعات کا کہنا تھا کہ میں میڈیا کے ساتھ پارٹنر شپ کی طرز پر کام کروں گی، فواد چوہدری نے مشکل حالات میں وزارت چلانے کی بھرپور کوشش کی، ایم ڈی پی ٹی وی ٹیم کا حصہ اور اہم کردار ہوتا ہے، پہلے کہیں نہ کہیں ٹیم ورک کا فقدان رہا ہے۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ پہلی بار کسی وزیراعظم نے عوامی مفاد کیلئے کابینہ بدلی، کچھ فیصلے ملک اور عوام کے مفاد میں کرنا پڑتے ہیں، تبدیلی ہمیشہ اچھی ہوتی ہے ہچکچانا نہیں چاہیے، کچھ وزیراعظم چور دروازے سے تبدیل ہوئے۔

ایک سوال کے جواب میں مشیر اطلاعات نے بتایا کہ اسد عمر کو نکالا نہیں ہے وہ آج بھی پارٹی کا اثاثہ ہیں، حکومت کو ایسے معاشی ماہر کی ضرورت تھی جو عالمی مالیاتی اداروں سے پارٹنرشپ کرے، ہمیں پاکستان80ارب روپے کے خسارے میں ملا۔

ماضی میں پنجاب کو دیوالیہ کیا گیا بینک ڈیفالٹ کردیا گیا، وزیراعظم عوامی مشکلات کم کرنے اور انہیں معاشی مسائل سے نکالنے کیلئے ہرقدم اٹھانے کو تیار ہیں، حکومتی ٹیم کا کوئی بھی رکن کارکردگی دکھا کر ہی اپنے عہدے پر رہ سکے گا۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ نیشنل ایکشن پلان وزارت داخلہ سے منسلک ہے، وزارت داخلہ میں وہی کام کرسکتا ہےجو نیشنل سیکیورٹی اسٹریٹجی کاحصہ رہا ہو، وزیراعظم عمران خان اس وقت پاکستان کا واحد آپشن ہیں، وزیراعظم کا استحقاق ہے کہ وہ جس وزارت کو چاہیں اپنے پاس رکھ سکتے ہیں۔

فردوس عاشق اعوان نے پیپلز پارٹی کی حکومت پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ کیا مرتضیٰ وہاب کو نہیں معلوم کہ ان کی جماعت نے کتنی تبدیلیاں کی تھیں؟ پی پی دور میں بھی تین بار وزیرخزانہ کو تبدیل کیا گیا تھا، سندھ کے وزیراعلیٰ نے بھی محکمہ داخلہ اپنے پاس رکھی ہے، پہلے سندھ کے وزیراعلیٰ بھی محکمہ داخلہ کسی اور کو دیں

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں