The news is by your side.

Advertisement

آصف زرداری کو ان کی خواہش کے مطابق نہیں چھوڑ سکتے، فردوس عاشق اعوان

اسلام آباد : وزیراعظم کی معاونِ خصوصی برائے اِطلاعات ڈاکٹر فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ آصف زرداری کو خواہش کے مطابق نہیں چھوڑ سکتے، اپوزیشن ہمیشہ قانون سازی کیلئے مک مکا کی بلیک میلنگ کرتی ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے اے آر وائی نیوز کے پروگرام الیونتھ آور میں میزبان وسیم بادامی سے گفتگو کرتے ہوئے کیا، فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ آرمی چیف کی مدت ملازمت وتوسیع سے متعلق ایشو صرف حکومت کا نہیں ہے، پارلیمنٹ میں عدالتی فیصلے کے مطابق قانون پر بحث ہوگی۔

ان کا کہنا تھا کہ دیکھنا یہ ہے کہ اپوزیشن پوائنٹ اسکورنگ یا قومی مفاد پر کام کرے گی حالانکہ پیپلز پارٹی ہمیشہ پارلیمنٹ کی بالادستی کی بات کرتی رہی ہے، جب پارلیمنٹ کے پاس موقع آیا تو پی پی پوائنٹ اسکورنگ کررہی ہے۔

ایک سوال کے جواب میں فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ قانون کسی کی پسند یا ناپسند پر نہیں بنتا، گزشتہ بہتر سالوں سے قانون طاقتور کے گھر کی لونڈی بنا رہا، طاقتورشخصیات اپنی مرضی سے اِداروں کو کمزور کرتی رہیں۔

عمران خان کو وزیراعظم کا مینڈیٹ ملا ہے، اب نیا وزیراعظم آئندہ الیکشن کے بعد ہی آئے گا، وزیراعظم نے اپوزیشن پر ہاتھ ہلکا رکھنے کی کوئی بات نہیں کی تھی، اپوزیشن ہمیشہ قانون سازی کیلئے مک مکا کی بلیک میلنگ کرتی ہے، وزیراعظم قانون کی بالادستی اور احتساب چاہتے ہیں۔

فردوس عاشق اعوان نے مزید کہا کہ آصف زرداری کو ان کی خواہش کے مطابق نہیں چھوڑ سکتے، شہنشاہ عالم والا مخصوص ٹولہ اپنی مرضی سے علاج چاہتا ہے، کسی بھی شخص کی بیماری کو جانچنے کے پیرامیٹرز ہوتے ہیں، آصف زرداری کی بیماری کی تصدیق کرنا مشکل ہے۔

 انہوں نے بتایا کہ آصف زرداری کی بیماری کاسٹیٹس میڈیکل بورڈ دے سکتا ہے،اُن کےحق میں میڈیکل رپورٹ آنے تک زرداری کے باہر جانے کا فیصلہ نہیں کر سکتے، آصف زرداری سے متعلق بھی قانون کے مطابق فیصلے ہوں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں