The news is by your side.

Advertisement

جج کا بیان حلفی شریف خاندان کے خلاف چارج شیٹ ہے، فردوس عاشق اعوان

اسلام آباد: معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا ہے کہ جج کا بیان حلفی شریف خاندان کے خلاف چارج شیٹ ہے۔

تفصیلات کے مطابق معاون خصوصی برائے اطلاعات فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ جج ارشد ملک کا بیان حلفی ثبوت ہے کہ یہ نہ تو معصوم اور نہ ہی مظلوم ہیں، چارج شیٹ سسیلین مافیا، گاڈ فادر کا اصل مطلب سمجھاتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ ن لیگ کے لیڈر اقتدار میں ہوں تو مخالفوں کے گلے پکڑتے ہیں، یہی لیڈر مشکل میں ہوں تو انہی کے پاؤں پڑ جاتے ہیں۔

فردوس عاشق اعوان نے کہا کہ ان کی تاریخ، فراڈ، کرپشن، رشوت، بلیک میلنگ سے عبارت ہے، منفی ہتھکنڈے نہ چلیں تو عابد باکسر، ناصر بٹ کو استعمال کرتے ہیں۔

معاون خصوصی برائے اطلاعات کا کہنا تھا کہ جسٹس قیوم کی ٹیپ ہو یا جسٹس سجاد علی شاہ کی عدالت پر لیگیوں کا حملہ، رفیق تارڑ کا بریف کیس ہو یا دیواریں پھلانگ کر سپریم کورٹ پر حملہ، یہ شرمناک اقدام ملکی تاریخ کے سیاہ ترین باب ہیں۔

مزید پڑھیں: جج ارشد ملک کو دھمکیاں دینے والا کون تھا؟ اے آر وائی نیوز نے پتہ لگا لیا

واضح رہے کہ جج ارشد ملک کے بیان حلفی میں بھی ناصر جنجوعہ کا ذکر کیا گیا ہے، ناصر جنجوعہ نے جج کو بلیک میل کیا، ناصر جنجوعہ نے جج سے رابطہ کیا اور کہا کہ میں نے آپ کو لگوایا ہے۔ ناصر جنجوعہ کنسٹرکشن کمپنی کا مالک ہے۔

یاد رہے کہ جج ارشد ملک کی جانب سے جمع کرائے گئے بیان حلفی میں تہلکہ خیزانکشافات کرتے ہوئے کہا گیا تھا کہ پرانی ویڈیو دکھا کردھمکی دی گئی اور مجھ سے تعاون مانگا گیا، نواز شریف نے کہا کہ تعاون کریں گے تو مالامال کردیں گے اور حسین نواز نے بھی پچاس کروڑ روپے کی آفر کی تھی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں