site
stats
سندھ

فائرنگ سے زخمی پی ٹی آئی کارکن چل بسا، لاش سڑک پررکھ کردھرنا

کراچی : تین روز قبل فائرنگ کا نشانہ بننے والا پی ٹی آئی کا کارکن زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے جاں بحق ہوگیا۔ رہنماؤں اور کارکنوں نے لاش سڑک پررکھ کراحتجاج کیا۔ مشتعل مظاہرین نے حکومت سے ملزمان کی فوری گرفتاری کا مطالبہ کیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق پاکستان تحریک انصاف کا کارکن فضل رحیم اسپتال میں دوران علاج دم توڑ گیا۔ پی ٹی آئی کارکن کو اتوارکو شارع فیصل پر نامعلوم افراد نے گولی مارکر زخمی کردیا تھا۔

مقتول کی نمازہ جنازہ کے بعد پی ٹی آئی رہنما عارف علوی، عمران اسماعیل، حلیم عادل شیخ اوردیگرکارکنان لاش لے کر لسبیلہ چوک پرپہنچےاور دھرنا دیا، پی ٹی آئی رہنماؤں نے الزام لگایا کہ پولیس واقعے کوحادثہ قرار دینے کی کوشش کررہی ہے۔

پولیس کا کہنا ہےکہ فضل رحیم کسی اندھی گولی کانشانہ بنا ہے، جبکہ پی ٹی آئی کامؤقف ہے کہ اس کے کارکن کو منصوبہ بندی کے تحت قتل کیا گیا۔

تحریک انصاف کے رہنماؤں نے مطالبہ کیا ہے کہ فضل رحیم کے قتل میں ملوث ملزمان کو فوری گرفتار کرکے سزا    دی جائے۔

فائرنگ کے واقعے کو تین روز گزر چکے ہیں لیکن پولیس اب تک کسی ملزم کو پکڑنے میں فی الحال ناکام ہے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top