The news is by your side.

Advertisement

چیف جسٹس کے نوٹس کے بعد کے الیکٹرک کے سی ای او کیخلاف پہلا مقدمہ درج

کراچی: چیف جسٹس گلزار احمد کے نوٹس کے بعد کے الیکٹرک کے سی ای او مونس علوی کے خلاف پہلا مقدمہ درج کرلیا گیا۔

اے آر وائی نیوز کی رپورٹ کے مطابق کے الیکٹرک کے سی ای او مونس علوی کے خلاف مقدمہ کے الیکٹرک کے سب اسٹیشن میں کرنٹ لگنے سے شہری کی ہلاکت پر درج کیا گیا ہے۔

پولیس کے مطابق مقدمہ میں کے الیکٹرک کے ڈسٹری بیوشن ہیڈ عامر ضیا کا نام بھی شامل ہے، مقدمہ مقتول کے چچا کی مدعیت میں زیر دفعہ قتل بالسبب کے تحت درج کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ 19 سالہ فیضان کی موت کے الیکٹرک کے سب اسٹیشن میں کرنٹ لگنے سے ہوئی تھی، فیضان چند روز قبل ہی مانسہرہ سے کراچی آیا تھا۔

اس سے قبل فیضان کے اہلخانہ نے قانونی کارروائی کے لیے پولیس کو درخواست جمع کروائی تھی، درخواست میں کے الیکٹرک کے سی ای او کیخلاف بھی کارروائی کا مطالبہ کیا گیا تھا۔

مزید پڑھیں: چیف جسٹس کا کے الیکٹرک کا مکمل آڈٹ اور سی ای او مونس علوی کا نام ای سی ایل میں شامل کرنے کا حکم

اہلخانہ کا پولیس کو دئیے گئے بیان میں کہنا تھا کہ فیضان ساڑھے 8 بجے سب اسٹیشن کے پاس تصویر کھینچ رہا تھا، سب اسٹیشن میں پانی اور کرنٹ ہونے کی وجہ سے اس کی موت واقع ہوئی۔

خیال رہے کہ آج سپریم کورٹ رجسٹری میں چیف جسٹس گلزار احمد کی سربراہی میں کراچی میں غیراعلانیہ لوڈ شیڈنگ اور کرنٹ لگنے سے اموات پر سماعت ہوئی تھی۔

چیف جسٹس گلزار احمد نے سماعت کے دوران کراچی میں غیر اعلانیہ لوڈ شیڈنگ اور کرنٹ لگنےسے اموات پر کے الیکٹرک کا مکمل آڈٹ اور سی ای او کے الیکٹرک کا نام ای سی ایل میں شامل کرنے کا حکم دیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں