site
stats
پاکستان

تحفظ خواتین ایکٹ کے تحت پہلا مقدمہ درج

لاہور: تحفظ خواتین ایکٹ کے تحت پہلا مقدمہ درج کرلیا گیا، گزشتہ روزگورنرپنجاب نے دستخط کرکے بل کو ایکٹ کی شکل دی تھی۔

گزشتہ روز گورنر پنجاب رفیق رجوانہ نے پنجاب اسمبلی کی جانب سے منظور کیے جانے والے بل پردستخط کیے تھے جس کا مقصد خواتین کو گھریلو تشدد سےبچانا ہے۔


تحفظ خواتین بل قانون کی حیثیت اختیارکرگیا


 تفصیلات کے مطابق لاہور کی رہائی بصرہ بی بی نے اپنے شوہرکے خلاف تشدد کا مقدمہ درج کرایا ہے۔ تحفظ خواتین بل کے تحت یہ اپنی نوعیت کا پہلا مقدمہ ہے۔

’اس قانون پر عمل درآمد کے لیے ہر ضلع میں وائلنس ایگنسٹ ویمن سینڑز بنائے جارہے ہیں۔ یہ جنوبی ایشیا کے پہلے ایسے سینٹر ہیں جہاں تمام متعلقہ ادارے ایک ہی چھت کے نیچے موجود ہوں گے۔ جیسے پولیس پراسیکیوشن فرائنزک میڈیولیگل ماہر نفسیات اورشیلڑہوم وغیرہ۔‘

نئے قانون کے تین حصے ہیں ، پہلا پروٹیکشن آرڈر جس کی بدولت خواتین ہراساں کرنے والوں یا پھر جسمانی تشدد کرنے والوں کے خلاف عدالت سے پروٹیکشن آرڈر لے سکیں گی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top