site
stats
بزنس

رواں مالی سال کا پہلا مہینہ، برآمدات میں کمی

کراچی: رواں مالی سال کے پہلے ماہ میں ملکی اہم برآمدات میں کمی ریکارڈ کی گئی، مجموعی برآمدات میں سات فیصد کمی واقع ہوئی ہے۔

گزشتہ سال خوراک، ٹیکسٹائل، چمڑے، سرجیکل گڈز، قالین سمیت اہم برآمدات میں کمی ریکارڈ کی گئی، اعداد وشمار کے مطابق برآمدات چھ اعشاریہ آٹھ چھ فیصد کمی کے بعد ایک ارب سینتالیس کروڑ چورانوے لاکھ ڈالر رہی تھی۔

اعداد وشمار کے مطابق خدمات کے شعبے کی برآمدات میں بھی گزشتہ ماہ تریپن فیصد کی کمی ہوئی گزشتہ ماہ خدمات کی برآمادت کا حجم بتیس کروڑ ستر لاکھ ڈالر رہی۔

دوسری جانب ویمن چیمبر کی کمیٹی برائے ٹریڈ اینڈ انڈسٹری کی چیئرپرسن تبسم انوار نے کہا ہے کہ ایک مہینے میں ٹیکسٹائل کی برامدات میں چار فیصد کمی تشویش ناک ہے کیونکہ یہ سب سے زیادہ زرمبادلہ اور دوسرے نمبر پر سب سے زیادہ روزگار فراہم کرنے والا شعبہ ہے۔

انہوں نے کہا کہ اس سال جولائی میں ٹیکسٹائل کی برامدات 982.6 ملین ڈالر تک گری ہیں جو گزشتہ سال جولائی 1.02 ارب ڈالر تھیں،جی ایس پی کی سہولت ، جولائی 2015 میں ٹیکسٹائل پالیسی میں برامدکنندگان کو ترغیبات دینے اور موجودہ بجٹ میں مختلف سہولتیں دینے کے باوجود ٹیکسٹائل کی برامدات میں کمی سے حکومت کی پالیسیوں کی کمزوری کا پتہ چلتا ہے۔

تبسم انوار نے کہا کہ اس صورتحال میں ایکسپورٹ پالیسی میں 2018 ء تک برامدات کو 35ارب تک بڑھانے کا ہدف مذاق بن کر رہ گیا ہے کیونکہ ایکسپورٹ پالیسی کے اعلان کے بعد برامدات میں اضافہ نہیں ہو سکا ۔

انہوں نے مطالبہ کیا کہ ٹیکسٹائل کے شعبہ کی برامدات کے ساتھ اسکی استعداد بھی تیزی سے گرتی جا رہی ہے جس پر فوری توجہ دی جائے۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top