The news is by your side.

Advertisement

وفاقی پولیس کا اسامہ ستی کے قتل میں ملوث 5 اہلکاروں کیخلاف بڑا ایکشن

اسلام آباد: اسامہ ستی کے قتل میں ملوث 5 اہلکاروں کو قصور وار ثابت ہونے پر پولیس سروس سے برطرف کرتے ہوئے برطرفی کا نوٹیفکیشن جاری کردیا گیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسامہ ستی قتل کیس میں وفاقی پولیس نے بڑا ایکشن لیتے ہوئے واقعے میں ملوث 5 اہلکاروں کو پولیس سروس سے برطرف کردیا گیا ، پولیس اہلکاروں کو مس کنڈیکٹ اورقصور وار ثابت ہونے پر برطرف کیا گیا۔

پولیس اہلکاروں کےبرطرفی کانوٹیفکیشن جاری کر دیاگیاہے ، برطرف ہونے والوں میں سب انسپکٹرافتخار، کانسٹبل مصطفی، شکیل، مدثر ، سعید شامل ہیں۔

دوسری جانب اسلام آبادمیں نوجوان اسامہ قتل کیس کی تحقیقات کرنے والی جے آئی ٹی کا اجلاس ایس پی صدرزون سرفرازکی سربراہی میں آج ہوگا، اجلاس میں مدعی مقدمہ ندیم یونس سمیت وائرلیس آپریٹرز،جائےوقوعہ کادورہ کرنےوالےافسران و اہلکار کو طلب کیا گیا ہے۔

اجلاس میں اب تک کے بیانات اور ریکارڈ کا جائزہ لیا جائے گا جبکہ مقتول کے والد نے جے آئی ٹی میں پیش ہونے کا فیصلہ کرلیا اور کہا
میرے بیٹے کا موبائل بھی پولیس کے پاس ہے۔

یاد رہے نوجوان اسامہ قتل کیس کی جے آئی ٹی کے پہلے اجلاس میں تمام ملزمان کے بیانات قلمبند کئے گئے تھے ، ملزمان نے جے آئی ٹی کو بتایا کہ ڈکیتی کی کال پر کارروائی عمل میں لائی گئی، جس پر جے آئی ٹی نے ملزمان اور مقتول اسامہ کے فون کا ڈیٹا طلب کرلیا تھا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں