The news is by your side.

فکس اٹ کے عالمگیرخان وزیراعلیٰ ہاؤس کے سامنے سے گرفتار

کراچی: فکس اٹ مہم کےعالمگیرخان کو وزیراعلیٰ ہاؤس کے باہراحتجاج کرتے ہوئے گرفتارکرلیا گیا۔

عالمگیرخان نے گزشتہ دنوں سندھ حکومت سے مطالبہ کیا تھا کہ انہیں بتایا جائے کہ شہری اپنا کچرا کہاں پھینکیں بصورت دیگر وہ وزیراعلیٰ  ہاؤس کے سامنے کچرا ڈھیر کردیں گے۔

عالمگیرخان اپنے اعلان کے مطابق ایک ٹرالی میں کچرا لے کروزیراعلیٰ ہاوٗس کے قریب پہنچے تو انہیں آگے جانے سے روک دیا گیا۔

وہ جیسے ہی مقررہ حد میں پہنچے تو پولیس عالمگیراوران کے ڈرائیورپر ٹوٹ پڑی اورانہیں تشدد کا نشانہ بنانے کے بعد گرفتارکرلیا۔

ذرائع کے مطابق عالمگیرخان کوحراست میں لے کرساؤتھ زون کے ایک تھانے کی پولیس موبائل کے ذریعےنامعلوم مقام پرمنتقل کردیا گیا۔

اس سے قبل عالمگیرخان نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’’وہ وزیراعلیٰ ہاؤس کا احترام کرتے ہیں تاہم حکام کو یہ پیغام دینا چاہتے ہیں کہ شہر کی صفائی کامناسب انتظام کیاجائے‘‘۔

انہوں نے عوام سے اپیل کی کہ ’’وہ وزیراعلیٰ ہاؤس کے باہرکچرے کی ڈسٹ بن رکھ رہے ہیں، عوام بھی کچرا یہاں لاکرڈالیں تاکہ حکام کو عام آدمی پربیتنے والی تکلیف اوردشواریوں کا اندازہ ہو‘‘۔

عالمگیر خان کی گرفتاری کے بعد پولیس نے ٹریکٹرکو اپنی تحویل میں لے لیا ہے تاہم کچرے کی ٹرالی وہیں ہے اورعالمگیر کا سوال اپنی جگہ موجود ہے کہ اس کچرے کو کہاں ٹھکانے لگایا جائے۔

ذرائع کے مطابق عالمگیرکی آمد سے قبل ہی پولیس اہلکاروں کی کثیرتعداد یہاں تعینات تھی اورآمد ورفت منقطع کردی گئی تھی۔

Print Friendly, PDF & Email

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں