سکھوں سے متعلق میرے بیان کو توڑ مروڑ کر پیش کرنے کی کوشش کی گئی: وزیرِ خارجہ -
The news is by your side.

Advertisement

سکھوں سے متعلق میرے بیان کو توڑ مروڑ کر پیش کرنے کی کوشش کی گئی: وزیرِ خارجہ

اسلام آباد: وفاقی وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی نے بھارتی وزیرِ خارجہ سشما سوراج کو جواب دیتے ہوئے کہا ہے کہ سکھوں سے متعلق میرے بیان کو توڑ مروڑ کر پیش کرنے کی کوشش کی گئی۔

تفصیلات کے مطابق شاہ محمود قریشی نے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹویٹر پر بھارتی وزیرِ خارجہ کے شر انگیز بیان کو مسترد کرتے ہوئے کہا کہ ان کے بیان کو توڑ مروڑ کر پیش کیا گیا۔

وزیرِ خارجہ نے ٹویٹ کیا کہ میں نے جو کہا تھا وہ صرف بھارت سے دو طرفہ تعلقات کے حوالے سے تھا۔ سکھوں کے جذبات ابھارنے کی دانستہ کوشش گم راہ کن اور حقائق کے برعکس ہے۔

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ ہم سکھوں کے جذبات کی بے حد عزت کرتے ہیں، اور کوئی سازش، کسی قسم کے تنازع یا حقائق مسخ کرنے سے اس کو متاثر نہیں کیا جا سکتا۔

وفاقی وزیرِ خارجہ نے کہا کہ پاکستان نے سکھوں کی خواہش کو مدِ نظر رکھتے ہوئے کرتارپور بارڈر کھولنے کا فیصلہ کیا، ہم نے تاریخی قدم اٹھایا ہے اور اس کو نیک نیتی سے آگے بڑھائیں گے۔


یہ بھی پڑھیں:  کرتارپور راہداری: بھارتی ہٹ دھرمی برقرار، سارک کانفرنس میں شرکت سے انکار


واضح رہے کہ وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی نے گزشتہ دنوں اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ سشما سوراج نے اندرونی سیاسی مجبوری کی وجہ سے نیویارک میں پاک بھارت وزرائے خارجہ ملاقات سے انکار کیا جب کہ عمران خان نے کرتارپور کی گگلی پھینکی تو بھارت کو اپنے وزیر بھیجنے پڑے۔

اس بیان کو بھارتی وزیرِ خارجہ سشما سوراج نے روایتی شر انگیزی کا مظاہرہ کرتے ہوئے سکھ برادری کے جذبات کی طرف موڑ دیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں