The news is by your side.

Advertisement

وزیرخارجہ کا پاک بھارت جنگ بندی معاہدے کا خیرمقدم

اسلام آباد: وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے پاکستان اور بھارت کے درمیان سیز فائر کا خیر مقدم کرتے ہوئے کہا بھارت کے 5اگست کے یکطرفہ اقدامات کے برعکس اسے مثبت قدم سمجھتا ہوں۔

تفصیلات کئے مطابق وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی نے اے آر وائی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہویے پاک بھارت سیز فائر پر اتفاق کے حوالے سے کہا کہ پاکستان اور بھارت کا2003کا سیزفائرمعاہدہ سب سے مؤثر تھا ، عام شہریوں کو نشانہ بنائے جانے پر 2003 کی معاہدہ اہمیت کا حامل تھا، عالمی سطح پر ہم نےمسلسل سیز فائر خلاف ورزیوں کا تذکرہ کیا ، سیزفائر خلاف ورزیوں پر مسلسل اپنے تحفظات سے آگاہ کرتےرہے۔

وزیرخارجہ کا کہنا تھا کہ آج کی پیش رفت کو مثبت سمجھتا ہوں بھارت کو نیک نیتی سے عملدرآمد کرنا چاہیے، بھارت کے 5اگست کے یکطرفہ اقدامات کے برعکس اسے مثبت قدم سمجھتا ہوں، ہمیں دیکھنا ہوگا اس مثبت قدم کے ذریعے آنیوالے دنوں میں کیا پیش رفت ہوگی۔

مختلف وزرائے خارجہ سے جتنی گفتگو ہوتی رہی اس میں خطے کی صورتحال پر نظر تھی، بھارت آج کے اٹھائے گئے قدم پر قائم رہتاہےتو یہ مثبت پیش رفت ہوگی۔

بھارت کشمیرمیں جس کامیابی کی توقع کررہا تھا وہ نہیں مل سکی، بھارتی اقدامات سے معاملات سدھرنے کے بجائے بگڑےہیں، 5اگست سے بھارتی اقدام سے ماحول مزید خراب ہوا اور یکطرفہ اقدامات سےبھارت کی عالمی سطح پر پسپائی ہورہی ہے ، بھارت اپنے فیصلوں ،پالیسی پر نظرثانی کرتاہے تو یہ سفارتکاری میں مثبت قدم ہوگا۔

یاد رہے پاکستان اور بھارت کے درمیان ایل اوسی اوردیگر سیکٹرز پر آج سے سیز فائر کی خلاف ورزی نہ کرنے پر اتفاق ہوگیا، ڈی جی آئی ایس پی آر کا کہنا ہے کہ رابطے کے نتیجے میں 2003 کے سیزفائر کی انڈر اسٹیڈنگ پر من وعن عمل ہوگا۔

Comments

یہ بھی پڑھیں