The news is by your side.

Advertisement

استعفوں کے لیے مناسب وقت 2023 ہے: وزیر خارجہ

اسلام آباد: وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ہے کہ پیپلز پارٹی کسی صورت استعفیٰ دینے اور سندھ حکومت چھوڑنے کے لیے تیار نہیں، مناسب وقت کا بہانہ بنا رہے ہیں، استعفوں کے لیے مناسب وقت تو 2023 ہے۔

ان خیالات کا اظہار وزیر خارجہ نے پارلیمنٹ ہاؤس میں میڈیا سےگفتگو کرتے ہوئے کیا، انھوں نے کہا پی ڈی ایم کے اندر خاصی بے چینی ہے، یکسوئی نہیں ہے، پیپلز پارٹی اور ن لیگ میں تحریک عدم اعتماد لانے پر بھی واضح اختلافات ہیں۔

شاہ محمود نے کہا پیپلز پارٹی کسی صورت استعفیٰ دینے اور سندھ کی حکومت کی قربانی دینے کے لیے تیار نہیں، عمر کوٹ میں ضمنی الیکشن کے دوران سندھ حکومت نے انتظامیہ کا بے دریغ استعمال کیا، اب وہ مناسب وقت کا بہانہ بنا رہے ہیں اور استعفوں کے لیے مناسب وقت تو 2023 کا ہے۔

وزیر خارجہ کا کہنا تھا پیپلز پارٹی کہہ رہی ہے کہ قانون کے مطابق پارلیمنٹ میں تحریک عدم اعتماد لائیں گے اور اگر وہ ایسا کرتے ہیں تو ہم پارلیمانی روایات کے مطابق اس کا مقابلہ کریں گے اور انھیں شکست دیں گے۔

خطے کے معاملات پر گفتگو کرتے ہوئے شاہ محمود قریشی نے کہا کہ ہمارا مؤقف یہ ہے کہ افغان مسئلے کا کوئی فوجی حل نہیں ہے، میرے نزدیک موجودہ امریکی قیادت کو بھی اس بات کا ادراک ہے، زلمے خلیل زاد کی خدمات جاری رکھنے کا فیصلہ اسی طرف اشارہ ہے، اس کی ترجیحات ہمارے نقطہ نظر سے مطابقت رکھتی ہیں، ہم نئی امریکی انتظامیہ کے ساتھ امن کی کاوشوں میں شریک رہیں گے۔

شاہ محمود کا کہنا تھا مسئلہ کشمیر عالمی سطح پر تسلیم شدہ تنازعہ ہے، یہ بھارت کا اندرونی مسئلہ نہیں، گزشتہ 17 ماہ میں مقبوضہ جموں و کشمیر کو جیل میں بدل دیا گیا ہے، توقع ہے نئی امریکی انتظامیہ کشمیر کے حوالے سے اپنا مؤثر کردار ادا کرے گی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں