The news is by your side.

Advertisement

پاکستان کا مقبوضہ کشمیرمیں صحافیوں کیخلاف کارروائیوں پر اظہار تشویش

اسلام آباد : ترجمان دفترخارجہ عائشہ فاروقی کا کہنا ہے کہ مقبوضہ کشمیرعالمی طورپرمتنازع علاقہ ہے، پاکستان کومقبوضہ کشمیرمیں صحافیوں کیخلاف کارروائیوں پرتشویش ہے، بی جے پی حکومت کی مسلمان دشمن پالیسیاں کورونا کی وبا کے دوران بھی جاری ہیں۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان دفترخارجہ عائشہ فاروقی نے ہفتہ وارنیوزبریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ بھارت کی جانب سےمقبوضہ وادی میں مظالم جاری ہیں، کشمیرعالمی سطح پرتسلیم شدہ متنازع علاقہ ہے ، مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی اقدامات عالمی قوانین کی خلاف ورزی ہیں.

عمران ٹرمپ رابطے کے حوالے سے دفترخارجہ کے ترجمان کا کہنا تھا کہ وزیراعظم اورصدرٹرمپ میں کوروناسےمتعلق بات چیت ہوئی، جس میں وزیراعظم نےٹرمپ کو کورونا سے نمٹنے کے اقدامات سےآگاہ کیا۔

عائشہ فاروقی نے کہا کہ پاکستان کو مقبوضہ وادی میں صحافیوں کےخلاف اقدامات پرتشویش ہے، بی جے پی حکومت کی مسلمان دشمن پالیسیاں کورونا کی وبا کے دوران بھی جاری ہیں اور کوروناکی آڑمیں بھارت اورمقبوضہ کشمیرمیں مسلمانوں کونشانہ بنایاجارہاہے۔

بیرون ممالک میں پھنسے پاکستانیوں کے حوالے سے ترجمان کا کہنا تھا کہ بیرون ملک سےپاکستانیوں کی واپسی کےاقدامات کیے جارہے ہیں۔

انھوں نے مزید کہا کوروناسےنمٹنے سے متعلق سارک ممالک کی کانفرنس آج ہورہی ہے، ویڈیولنک کانفرنس پاکستان کی تجویزپرہورہی ہے۔

خیال رہےپاکستان سارک ممالک کی کوویڈ-19پر ویڈیو کانفرنس کی میزبانی کرے گا، ویڈیو کانفرنس میں پاکستانی وفد کی قیادت معاون خصوصی ظفرمرزا کریں گے۔

’کانفرنس کا مقصد پاکستان کے وزراصحت اجلاس کے قدم کو بڑھانا ہے، کرونا کے حوالے سے رکن ممالک اپنی قومی کوششوں سے آگاہ کریں گے، اس دوان بحران کے مقابلے کے لیے گہرے تعاون پر بھی بات ہوگی‘

Comments

یہ بھی پڑھیں