The news is by your side.

Advertisement

پہلی بار خواجہ سرا نے کمپنی رجسٹرڈ کروا لی

اسلام آباد: ملکی تاریخ میں پہلی بار خواجہ سرا نے سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان (ایس ای سی پی) میں کمپنی رجسٹرڈ کر والی۔

تفصیلات کے مطابق سرمایہ کاری کے حوالے سے حکومت کی بہتر پالیسیوں کے باعث سازگار ماحول پیدا ہو رہا ہے جس کی وجہ سے سرمایہ کاری کے مواقع بڑھ رہے ہیں۔

سرمایہ کاروں کو دوستانہ ماحول ملنے پر ملکی تاریخ میں پہلی بار خواجہ سرا نے سیکیورٹیز اینڈ ایکسچینج کمیشن آف پاکستان (ایس ای سی پی) میں کمپنی رجسٹرڈ کر والی ہے۔

خواجہ سرا نایاب علی نے”ٹرانس جینڈر رائٹس کنسلٹنٹ” کے نام سے کمپنی (ایس ای سی پی) میں رجسٹرڈ کروائی۔یہ کمپنی ایس ای سی پی کے پاس 28 جنوری کو رجسٹرڈ ہوئی ہے۔

یہ بھی پڑھیں: پاکستان کے پہلے خواجہ سرا نے عالمی اعزاز تک رسائی حاصل کر لی

واضح رہے کہ پاکستان کے خواجہ سرا کو پہلی بار عالمی ایوارڈ کے لیے منتخب بھی کیا گیا ہے، خواجہ سرا نایاب علی کو عالمی ایوارڈ دی گالاز 8 فروری کو دیا جائے گا۔

اس ایوارڈ کے لیے نامزد خواجہ سرا نایاب علی ایک تعلیم یافتہ شہری ہیں اور ماسٹر ڈگری حاصل کر چکے ہیں، میٹرک کا امتحان اے پلس گریڈ کے ساتھ دیا، این ٹی ایس ٹیسٹ میں کام یاب نہ ہونے کے سبب ڈاکٹر بننے کی خواہش پوری نہ ہو سکی، نایاب علی نے مذہبی تعلیم بھی حاصل کی۔

Comments

یہ بھی پڑھیں