The news is by your side.

Advertisement

کاریں بنانے والی بڑی کمپنی کا بھارت چھوڑنے کا اعلان

نئی دہلی: فورڈ کو بھارت میں 2 ارب ڈالرز کا نقصان ہونے کے بعد کمپنی نے بھارت میں پلانٹ بند کرنے کا اعلان کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق تقریباً دو بلین ڈالر کا نقصان اٹھانے کے بعد فورڈ موٹر کمپنی بھارت میں گاڑیاں بنانا بند کر رہی ہے، کیوں کہ اسے بھارت میں منافع کے حصول کا کوئی راستہ نظر نہیں آ رہا، اس طرح وہ ایشیائی حریفوں کے زیر اثر ترقی کرتی ہوئی بڑی مارکیٹ کو چھوڑنے والی ایک اور کار ساز کمپنی بن گئی ہے۔

فورڈ نے اعلان کیا ہے کہ وہ بھارت میں وہ کار بنانے کے دونوں پلانٹ بند کر رہی ہے، کمپنی کے مطابق 2022 کی دوسری سہ ماہی تک ریاست گجرات اور تمل ناڈو میں کارخانے بند کر دیے جائیں گے۔ تاہم کمپنی کے اعلان کے مطابق کار انجن بنانے کی فیکٹری بدستور بھارت میں رہے گی، جہاں سے تیار کیے گئے انجن بیرون ملک برآمد کیے جائیں گے۔

سعودی عرب: نئی طرز کی گاڑیاں تیار کرنے کا اعلان

واضح رہے کہ فورڈ تیسری ایسی امریکی کمپنی ہے جس نے حالیہ برسوں میں بھارت میں اپنا کاروبار ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ اس سے قبل 2017 جنرل موٹرز نے بھارتی مارکیٹ سے بوریا بستر سمیٹا تھا، اور ہارلے ڈیوڈسن نے بھی انڈین مارکیٹ کے لیے کاریں بنانا بند کر دیا تھا۔

نئی کاروں کی مانگ میں بے حد کمی کی وجہ سے بھارت میں کاریں بنانے والی کمپنیوں کو اربوں ڈالر کا نقصان اٹھانا پڑ رہا ہے، فورڈ بھارت میں اپنی گاڑیوں کے 5 مختلف ماڈلز متعارف کرا چکی ہے اور یہ کمپنی گزشتہ پچیس سالوں سے بھارت میں کاریں تیار کر رہی ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں