فارن فنڈنگ کیس الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کو ایک اور مہلت دیدی -
The news is by your side.

Advertisement

فارن فنڈنگ کیس الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کو ایک اور مہلت دیدی

اسلام آباد : فارن فنڈنگ کیس میں الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کو ایک اور مہلت دیتے ہوئے اٹھارہ ستمبر تک فارن فنڈنگ کی تمام تفصیلات جمع کرانے کی ہدایت کردی۔

تفصیلات کے مطابق چیف الیکشن کمشنر سردار محمد رضا کی سربراہی میں چار رکنی بنچ نے پی ٹی آئی فنڈنگ کیس کی سماعت کی، سماعت کے دوران چيف الیکشن کمشنر نے پی ٹی آئی وکیل سے فنڈنگ کی تفصیلات جمع نہ کرانے کی وجہ پوچھی تو وکیل نے بتایا کہ اسلام آباد ہائی کورٹ نے دو ہفتے میں تفصیلات دینے کاحکم دیا ہے، اس مدت میں ریکارڈ جمع کرادیں گے۔

جس پر چیف الیکشن کمشنر نے کہا تحريک انصاف نے الیکشن کمیشن کو ریسلنگ رنگ بنا رکھا ہے، تین سال سے آپ کا موقف واضح نہیں ہوسکا۔

الیکشن کمیشن نے فارن فنڈنگ سے متعلق محفوظ فیصلہ سناتے ہوئے تحريک انصاف کو ایک اور مہلت دے دی اور کہا کہ اٹھارہ ستمبر تک پارٹی فنڈنگ پر جواب جمع نہ کرایا گیا تو تمام الزامات درست تصور کرلیے جائیں گے۔

الیکشن کمیشن کے باہر میڈیا سے گفتگو ميں اکبر ایس بابر نے کہا تحريک انصاف نے ہنڈی کے ذریعے منتقل کی گئی رقم کی کوئی تفصیل نہیں دی ، پی ٹی آئی نے جھوٹی دستاویزات جمع کرا کر عدالت کو گمراہ کیا۔

تحريک انصاف کے وکیل ثقلین حیدر نے کہا کسی فرد واحد کو فارن فنڈنگ کیس کی تفصیلات نہیں دیں گے۔

تحريک انصاف کے خلاف فارن فنڈنگ کیس کی آئندہ سماعت اٹھارہ ستمبر کو ہوگی۔


اگرآپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اوراگرآپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پرشیئرکریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں