The news is by your side.

Advertisement

امریکا کے ساتھ باہمی احترام پر مبنی تعلقات چاہتے ہیں، شاہ محمود قریشی

واشنگٹن: وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی نے پاکستانی کمیونٹی سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستان امریکا کے ساتھ باہمی احترام پر مبنی تعلقات چاہتا ہے۔

شاہ محمود قریشی امریکی دعوت پر آج صبح واشنگٹن پہنچے ہیں، پاکستانی کمیونٹی کی جانب سے منعقدہ تقریب میں انھوں نے کہا کہ وزیرِ اعظم کی خواہش ہے کہ امریکا میں پاکستانیوں سے زیادہ رابطہ رکھا جائے۔

وزیرِ خارجہ کا کہنا تھا کہ وزیرِ اعظم امریکا میں مقیم پاکستانیوں کے تعمیری کردار کے معترف ہیں، بیرون ملک پاکستانی ملکی معیشت کے استحکام کے لیے کردار ادا کر سکتے ہیں۔

وزیرِ خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا ’بہ طورِ وزیرِ خارجہ میں نے پہلا دورہ افغانستان کا کیا ہے، پاکستان کا امن اور خوش حالی افغانستان کے امن سے وابستہ ہے، افغان مسئلے کا حل عسکری نہیں سیاسی ہے۔‘

بھارت کے ساتھ تعلقات کے حوالے سے انھوں نے تقریب میں کہا کہ خطے میں امن کے لیے بھارت ایک قدم بڑھائےگا تو ہم دو قدم بڑھائیں گے۔


یہ بھی پڑھیں:  وزیرخارجہ شاہ محمود قریشی واشنگٹن پہنچ گئے


شاہ محمود قریشی نے کہا ’ہم بلا امتیاز احتساب کے عمل کو یقینی بنائیں گے۔‘ ملک کی معاشی صورتِ حال کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ معاشی شعبے میں بہتری کے لیے نیا مالیاتی ترمیمی بل پیش کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ وزیرِ خارجہ کل پاکستانی سفارت خانے میں بھی خطاب کریں گے، جب کہ 26 ستمبر کو سارک وزرا خارجہ کونسل کے اجلاس میں شرکت کریں گے، 29 ستمبر کو نیویارک میں اقوامِ متحدہ کی جنرل اسمبلی میں بھی خطاب کریں گے۔

شاہ محمود قریشی دورے کے شیڈول کے مطابق واشنگٹن میں امریکی ہم منصب مائیک پومپیو سے ملاقات کریں گے، یہ ملاقات یکم اکتوبر کے بعد ہوگی۔ وزیرِ خارجہ اگلے ماہ 3 اکتوبر کے بعد وطن واپس پہنچیں گے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں