The news is by your side.

Advertisement

کابل دھماکا : کسی بھی پاکستانی کے ملوث ہونے کا پراپیگنڈا مسترد کرتے ہیں، ترجمان دفترخارجہ

اسلام آباد : دفتر خارجہ ترجمان ڈاکٹر فیصل نے کابل دھماکے میں کسی بھی پاکستانی کے ملوث ہونے کا پراپیگنڈا مسترد کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان ہر قسم کی دہشت گردی کی شدید الفاظ میں مذمت کرتا ہے۔

یہ بات انہوں نے اپنے جاری بیان میں کہی۔ ڈاکٹر فیصل نے کہا کہ بعض میڈیا رپورٹس کے مطابق کابل دھماکہ داعش نے کرایا اور خودکش حملہ آور پاکستانی شہری تھا۔

ترجمان دفترخارجہ کے مطابق پاکستان ان تمام بےبنیاد الزامات کو مسترد اور دہشت گردی کی مذمت کرتا ہے، انہوں نے کہا کہ خود کش حملہ آور کے پاکستانی ہونے اور داعش کا نام نہاد اور بے بنیاد دعویٰ جھوٹ پر مبنی ہے۔

پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف کامیاب کارروائیاں کی ہیں اور علاقائی امن و سلامتی کیلئے اپنا مثبت کردار ادا کرتا رہا ہے اور آئندہ بھی کرتا رہے گا۔

یاد رہے کہ ہفتہ اور اتوار کی درمیانی شب افغانستان کے دارالحکومت کابل میں خودکش بمبار نے شادی کی تقریب میں خود کو دھماکہ خیز مواد سے اڑا دیا جس کے نتیجے میں63افراد جان کی بازی ہار گئے۔ دھماکہ مقامی وقت کے مطابق رات 10 بج کر40 منٹ پر ہوا۔

اس سے قبل گزشتہ ہفتے کابل پولیس اسٹیشن کے باہر دھماکہ ہوا تھا جس میں کم از کم 14 افراد ہلاک جبکہ 150 زخمی ہوگئے تھے حملے کی ذمہ داری طالبان نے قبول کی تھی۔

واضح رہے کہ افغانستان میں حالات بہت کشیدہ رہے ہیں حالانکہ طالبان اور امریکہ امن معاہدے کے اعلان کے قریب پہنچ رہے ہیں طالبان اور امریکی نمائندے قطر کے دارالحکومت دوحہ میں امن مذاکرات کررہے ہیں اور فریقین نے پیشرفت کی اطلاع بھی دی ہے۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں