پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ اپنے وسائل سے لڑی: دفتر خارجہ Foreign Office
The news is by your side.

Advertisement

پاکستان کو واچ لسٹ میں شامل کرنے کا اقدام مسترد، امریکا وضاحت کرے: دفتر خارجہ

اسلام آباد: ترجمان دفتر خارجہ نے کہا ہے کہ پاکستان کو واچ لسٹ میں شامل کرنے کا امریکی اقدام مسترد کرتے ہیں، امریکی رپورٹ حقائق پر مبنی نہیں، امریکا اقدام کی وضاحت کرے۔

تفصیلات کے مطابق ترجمان دفتر خارجہ ڈاکٹر فیصل نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ پاکستان مذہبی آزادی اور انسانی بنیادی حقوق کا تحفظ فراہم کرتا ہے، عالمی برادری مذہبی حقوق کے لیے اٹھائے جانے والےاقدامات سے باخبر ہے۔

یہ بھی پڑھیں: مذہبی آزادی، امریکا نے پاکستان سمیت 11 ممالک کو واچ لسٹ میں شامل کرلیا

ان کا کہنا تھا کہ اقلیتوں سے نارواسلوک والے ممالک کا نام واچ لسٹ میں شامل نہیں کیا گیا، اس فیصلے سے دوہرے معیار اور سیاسی مقاصد کا اندازہ ہوتا ہے، واچ لسٹ میں ڈالنےسے پاکستان کی قربانیوں کو نظر انداز کیا گیا۔

پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ اپنے وسائل سے لڑی

قبل ازیں ترجمان دفتر خارجہ نے آج اپنے ایک بیان میں کہا تھا کہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف جنگ اپنے وسائل سے لڑی، گذشتہ پندرہ سال میں دہشت گردی کے خلاف 120 بلین ڈالرخرچ ہوئے۔

تفصیلات کے مطابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی دھمکیوں‌ اور الزامات کے جواب میں‌ دفتر خارجہ سے جاری ہونے والے بیان میں‌ کہا گیا تھا کہ پاکستان نے یہ جنگ اپنے زور بازو سے لڑی اور خطے میں استحکام، شہریوں کے تحفظ کے لئے یہ جنگ جاری رکھی جائے گی۔

دفتر خارجہ کے مطابق پاکستان کے تعاون اور کردار سے عالمی برادری کو بھی فائدہ ہوا، پاک فوج نے تسلسل کےساتھ کارروائیوں سے دہشت گردوں کا صفایا کیا، پاکستان کے اقدامات پرسرحد پار سے بھی ایسے اقدامات کا انتظار ہے۔

یہ بھی پڑھیں: ہم نے امداد دی، پاکستان نے دھوکا دیا، اب ایسا نہیں ہوگا: امریکی صدر کی ہرزہ سرائی

یاد رہے کہ چند روز قبل امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے امداد کے باوجود پاکستان کی جانب سے دہشت گردوں‌ کے خلاف کارروائیاں نہ کرنے کا الزام عائد کیا تھا، جس کے بعد پاکستان کی امداد بند کر دی گئی تھی۔

اس بیان اور امریکی اقدامات کا حکومت پاکستان اور پاک فوج کی جانب سے سخت جواب دیا گیا، وزیر خارجہ خواجہ آصف نے پاک امریکا تعلقات پر نظر ثانی کا عندیہ دیا تھا۔

پاک فوج واضح کرچکی ہے، ڈرون حملے کا بھرپورجواب دیا جائے گا، دفتر خارجہ

اب دفتر خارجہ کی جانب سے یہ اہم بیان سامنے آیا ہے کہ پاکستان نے یہ جنگ اپنے وسائل پر لڑلی، گذشتہ پندرہ سال میں دہشت گردی کے خلاف 120 بلین ڈالرخرچ ہوئے، پاکستان کےتعاون سےعالمی برادری کوبھی فائدہ ہوا اور پاکستانی شہریوں‌ کے تحفظ کے لیے یہ جنگ جاری رکھی جائے گی۔


اگر آپ کو یہ خبر پسند نہیں آئی تو برائے مہربانی نیچے کمنٹس میں اپنی رائے کا اظہار کریں اور اگر آپ کو یہ مضمون پسند آیا ہے تو اسے اپنی فیس بک وال پر ضرور شیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں