حج کرپشن کیس، حامد سعید کاظمی کو رہا کردیا گیا -
The news is by your side.

Advertisement

حج کرپشن کیس، حامد سعید کاظمی کو رہا کردیا گیا

اسلام آباد: حج اسکینڈل کیس میں بری ہونے والے سابق وفاقی وزیر مذہبی امور حامد سعید کاظمی کو اڈیالہ جیل سے رہا کردیا گیا۔

تفصیلات کے مطابق 7 برس قبل حج اسکینڈل میں گرفتار ہونے والے اس وقت کے وفاقی وزیر برائے مذہبی امور حامد سعید کاظمی کو اڈیالہ جیل سے رہا کردیا گیا، انہیں عدالت نے تمام الزامات سے بری کردیا تھا تاہم انہوں نے ایک سال سے زائد عرصہ جیل میں گزارا۔

اپنی رہائی کے موقع پر انہوں نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ الزامات سے بری ہونے پر اللہ کے حضور شکریہ ادا کرتا ہوں اور ساتھ ہی اُن تمام دوستوں کا شکر گزار ہوں جنہوں نے اس مشکل وقت میں میرا ساتھ دیا۔

اسی سے متعلق : حج کرپشن کیس، سابق وفاقی وزیرحامد کاظمی ساتھیوں سمیت بری

سابق وفاقی وزیر نے کہا کہ میں نے عام قیدیوں کی طرح جیل میں وقت گزارا مجھے کسی بھی قسم کی کوئی سہولت فراہم نہیں کی گئی اور نہ کسی سے رابطہ رہا۔

حامد سعید کاظمی نے کہا کہ 6 سال تک میرا میڈیا ٹرائل چلتا رہا اور ناکردہ گناہوں کی سزا دی گئی مگر کوئی بھی شخص میرے حق میں نہیں بولا تاہم دیر آئد درست آئد کے مصداق فتح حق کی ہوئی اور اب ملتان کی موجودہ صورت حال کا جائزہ لے کر اپنی نئی حکمت عملی طے کروں گا۔

یہ بھی پڑھیں : حج کرپشن کیس، سابق وزیر مذہبی امورحامد سعید کاظمی کو16 سال قید کی سزا

واضح رہے کہ سال 2010 میں حج اسکینڈل کے منظر عام پر آنے کے بعد وفاقی وزیر مذہبی امور حامد سعید کاظمی سمیت دیگر افسران کے خلاف مقدمہ قائم کیا گیا اور عدالت نے انہیں 16 سال قید کی سزا سنائی تاہم 20 مارچ کو ہائی کورٹ نے انہیں اور راؤشکیل و جوائنٹ سیکریٹری حج کو بری کردیا تھا۔

یاد رہے کہ حج کرپشن اسکینڈل کے سامنے آنے کے بعد حامد سعید کاظمی کو وزارت مذہبی امور سے ہاتھ دھونا پڑے تھے جبکہ دو ہزار گیا رہ کے اوائل میں انہیں گرفتار کیا گیا اور تقریباً ایک برس جیل میں گذارنے کے بعد انہیں رہا بھی کردیا گیا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں