site
stats
سندھ

شاہ فیصل سےحیدرآباد جانے والے 4 کارکنان لاپتہ کردیے گئے، ایم کیو ایم

کراچی : شاہ فیصل ٹاؤن سے حیدرآباد جانے والے چار کارکنان لاپتہ ہونے پر ایم کیو ایم نے شدید تحفظات کا اظہار کردیا۔

تفصیلات کے مطابق متحدہ قومی موومنٹ کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ مورخہ 13 اگست کی صبح کراچی سے حیدرآباد جاتے ہوئے4کارکنان اور ایک ہمدرد سمیت 5 افراد لاپتہ ہوگئے۔

اعلامیہ میں مزید کہا گیا ہے کہ لاپتہ ہونے والے کارکنان میں شاہ فیصل کالونی یوسی 11 کے آرگنائزر کامران خانزادہ، یوسی کمیٹی کے رکن کمال خانزادہ دو کارکنان حارث خانزادہ، عمیر اور ایک ہمدرد گڈو شامل ہیں۔

ایم کیو ایم نے خدشہ ظاہر کیا ہے کہ ’’کراچی سے حیدرآباد جاتے ہوئے قانون کرنے والے اداروں کے اہلکاروں نے ہمارے کارکنان اور ہمدرد کو گرفتار کرنے کے بعد لاپتہ کردیا ہے اور وہ جس گاڑی میں سوار تھے اُس کا بھی تاحال کوئی سراغ نہیں لگایا جاسکا۔‘‘۔

ایم کیو ایم نے 4 کارکنان کے لاپتہ ہونے پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ’’لاپتہ کارکنان اور ہمدردوں کو قانون نافذ کرنے والے اداروں نے غیر قانونی طور پر گرفتار کرکے لاپتہ کیا، رابطہ کمیٹی نے مزید کہا کہ ’’کراچی آپریشن کی آڑ میں ایم کیو ایم کے کارکنان کو بلاجواز گرفتار اور جبری طور پر لاپتہ کیا جارہا ہے‘‘۔

ایم کیو ایم نے وزیراعظم پاکستان، چیف آف آرمی اسٹاف جنرل راحیل شریف، وفاقی وزیر داخلہ چوہدری نثار اور وزیر اعلیٰ سندھ سے اپیل کی ہے کہ وہ کارکنان کے لاپتہ ہونے کا کا نوٹس لیں اور اُن کی بازیابی کے لیے ہر سطح پراقدامات کریں۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top