The news is by your side.

Advertisement

اسپتالوں میں وینٹی لیٹرکی تعداد 550 ہے ، محکمہ صحت

کراچی : دنیا کے دیگر ممالک کی طرح پاکستان میں بھی کورونا وائرس کی وبا کی چوتھی لہر کے دوران کیسوں کی تعداد میں غیر معمولی اضافہ ہوتا جارہا ہے۔

اس صورت حال کے پیش نظر سرکاری اور نجی اسپتالوں میں کرونا متاثرین کے لیے انتظامات کم پڑنے کا خدشہ ہے، خاص طور پر وینٹی لیٹرز اور بیڈز کم ہوتے جارہے ہیں۔

کراچی کے اسپتالوں میں خوش قسمتی سے ابھی تک تو ایمرجنسی کی صورتحال نہیں ہوئی لیکن اگر کورونا کیسزاسی رفتار سے بڑھتے رہے تو اسپتالوں میں مریضوں کو داخل کرنے کیلئے جگہ کم پڑ سکتی ہے۔

اس حوالے سے ترجمان محکمہ صحت سندھ کا کہنا ہے کہ کراچی کے اسپتالوں میں آئی سی یو بیڈز کے ساتھ وینٹی لیٹرز کی تعداد550ہے جبکہ مختلف اسپتالوں میں 102 مریض وینٹ پر ہیں۔

ترجمان محکمہ صحت کے مطابق آف وینٹ مریضوں کی تعداد106 ہے، آئی سی یو میں خالی وینٹ کی تعداد 232 ہے کراچی کے مختلف اسپتالوں میں ایچ ڈی یو بیڈزکی تعداد1374 ہے۔

اس کے علاوہ اسپتالوں میں ایچ ڈی یو میں زیرعلاج مریضوں کی تعداد212ہے، مختلف سرکاری ونجی اسپتالوں میں570ایچ ڈی یوبیڈزخالی ہیں۔

محکمہ صحت کا کہنا ہے کہ کم آکسیجن کی ضرورت کےحامل ا یچ ڈی یو میں زیرعلاج مریضوں کی تعداد181ہے جبکہ کم آکسیجن کی ضرورت کےحامل مریضوں کیلئے204 بیڈز خالی ہیں۔

 

Comments

یہ بھی پڑھیں