site
stats
سندھ

فروٹ کے بعد دودھ اور گوشت کا بھی بائیکاٹ کیا جائے، شہریوں کا مطالبہ

کراچی : منافع خوروں اورذخیرہ اندوزوں کوسبق سکھانے کے لئے پھلوں کے کامیاب بائیکاٹ کے بعد اہلیان کراچی نے غریب عوام کے لیے گوشت اور دودھ کے بائیکاٹ کوبھی ضروری قراردے دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق دودھ بنیادی غذا ہے لیکن اس کی قیمت84 روپے فی لیٹر ہے، مرغی کافی کلوگوشت 200 روپے اوراس سے زائد جبکہ گائے کاگوشت 500 اور بکرا850 روپے فی کلو بازار میں دستیاب ہے۔

مہنگائی کو شکست دینے کیلئے اب عوام نے کمرکس لی ہے، اس حوالے سے شہریوں کا کہنا ہے کہ گوشت اوردودھ کی قیمتوں کولگام دینے کے لیے ضروری ہے کہ فروٹ کی طرح گوشت اوردودھ کا بھی بائیکاٹ کیا جائے۔

ان کا کہنا تھا کہ بازاروں میں نہ سرکاری قیمتوں کی فہرست نظرآتی ہے اورنہ ہی قیمتوں کو کنٹرول کرنے والے اداروں کی رٹ کہیں دکھائی دیتی ہے۔

مزید پڑھیں : کراچی : 3 روزہ پھل بائیکاٹ مہم کا آغاز

ماہ رمضان میں بڑھتی ہوئی مہنگائی پرقابوپانے کے لیے عوام کاکمرکسنا اس بات کی عکاسی کرتا ہے کہ ذخیرہ اندوزوں اورمنافع خوروں کی دال اب نہیں گلنے والی۔

Print Friendly, PDF & Email
20

Comments

comments

اس ویب سائیٹ پر موجود تمام تحریری مواد کے جملہ حقوق@2018 اے آروائی نیوز کے نام محفوظ ہیں

To Top