کراچی میں گیس بحران سنگین ہوگیا، سندھ حکومت کی وفاقی حکومت پر شدید تنقید
The news is by your side.

Advertisement

کراچی میں گیس بحران، خواتین لکڑیوں پر کھانا پکانے پر مجبور

کراچی: شہرقائد کے مختلف علاقوں میں گیس بحران سنگین ہوگیا، خواتین گھروں میں لکڑیوں پر کھانا پکانے پر مجبور ہوگئیں۔

تفصیلات کے مطابق کراچی کے مختلف علاقوں گیس نہ ہونے کے باعث شہریوں کی زندگی اجیرن بن گئی، گھروں میں چولھے ٹھنڈے پڑ گئے۔

کراچی کے علاقے اولڈسٹی ایریا، کلفٹن، ڈیفنس،صدر، گلشن اقبال اور گلستان جوہر ایف بی ایریا سمیت پورے شہر میں گیس نایاب ہے۔

گیس نہ ہونے کے باعث خواتین لکڑیاں جلا کر کھانا پکانے پر مجبور ہیں، گیس کی قلت نے شہریوں کا سن ڈے بھی برباد کردیا۔

خواتین کے ساتھ ساتھ مرد حضرات کی بھی چھٹی خراب ہوگئی، وہ بھی گھروں میں آتش دان کے لیے لکڑیاں جلاتے نظر آئے۔

سندھ کی گیس سندھ والوں کو ہی نہیں مل رہی، مراد علی شاہ

شہریوں نے مطالبہ کیا ہے کہ حکومت گیس بحران کا فوری حال نکالے تاکہ اس پریشانی سے جلد از جلد چھٹکارا حاصل ہو۔

عوام کا کہنا تھا کہ بجلی کی لوڈ شیڈنگ کی طرح گیس کی بھی لوڈ شیڈنگ ہورہی ہے، کبھی چولھے پر گیس ہوتا ہے تو کبھی غائب ہوجاتا ہے۔

گذشتہ روز وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ سندھ کی گیس سندھ والوں کو ہی نہیں مل رہی، دیس کی کمی کے باعث کراچی کے شہری بھی چھٹی کے دن گھر کا کا کھانا کھانے سے محروم رہے۔

دوسری جانب ایم ڈی سوئی سدرن کا کہنا ہے کہ گیس نہیں ہے سردی سے شارٹ فال دو سو ایم ایم سی ایف ڈی تک پہنچ گیا ہے، ہفتہ میں دو دن ہفتہ اور اتوار کو صنعتی زونز کو گیس کی فراہمی بند کرنا پڑے گی۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں