اسرائیلی طیاروں کی غزہ پر بمباری، 10 افراد شہید، حماس کا سیز فائر کا اعلان gaza
The news is by your side.

Advertisement

اسرائیلی طیاروں کی غزہ پر بمباری، 10 افراد شہید، حماس کا سیز فائر کا اعلان

غزہ: اسرائیل نے غزہ میں 2014 کے بعد سے سب سے بڑے حملے کا دعویٰ کیا ہے جس کے نتیجے میں 10 افراد شہید ہوگئے، حماس نے اسرائیل سے سیز فائر کا اعلان کردیا ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق اسرائیل کی جانب سے کہ حماس کے ٹھکانوں پر 2014 کے بعد سے سب سے بڑا حملہ کیا گیا ہے جس کے نتیجے میں 10 افراد شہید ہوگئے ہیں۔

اسرائیلی وزیر اعظم نے الزام لگایا ہے کہ بمباری حماس کی جانب سے بار بار اسرائیل پر راکٹ حملوں کے جواب میں کی گئی ہے جس میں 3 اسرائیلی زخمی ہوگئے تھے۔

فلسطینی حکام کا کہنا ہے کہ حملے میں 10 افراد شہید جبکہ 12 زخمی ہوئے ہیں، دوسری جانب حماس کا کہنا ہے کہ جنگ بندی پر اتفاق ہوگیا ہے تاہم اسرائیل کی جانب سے کوئی تصدیق سامنے نہیں آئی ہے۔

حماس کے ترجمان کا کہنا ہے کہ غزہ پر اسرائیلی بمباری کے آغاز سے مصر کی سرپرستی میں قابض فوج کی جارحیت کو روکنے کے لیے بات چیت کا راستہ اختیار کیا گیا ہے تاکہ اسرائیلی جارحیت میں اضافہ نہ ہو۔

خیال رہے کہ گزشتہ ماہ فلسطین میں قابض اسرائیلی فوج نے فائرنگ کرکے چار نہتے فلسطینیوں کو شہید اور سینکڑوں کو زخمی کردیا تھا۔

واضح رہے کہ 2014ء میں اسرائیلی افواج نے غزہ کی ساحلی پٹی پرشدید بمباری کی تھی جس کے نتیجے میں 2 ہزار 2 سو زائد فلسطینی شہید ہوگئے تھے۔


خبر کے بارے میں اپنی رائے کا اظہار کمنٹس میں کریں‘ مذکورہ معلومات کو زیادہ سے زیادہ لوگوں تک پہنچانے کےلیے سوشل میڈیا پرشیئر کریں۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں