The news is by your side.

Advertisement

برطانیہ میں عام انتخابات ، ووٹنگ کا عمل جاری

لندن : برطانیہ میں عام انتخابات کا میدان سج گیا، کنزرویٹو اور لیبر پارٹی کے درمیان کڑا مقابلہ ہے تاہم ہنگ پارلیمنٹ بننے کا بھی امکان ہے، بریگزٹ کی وجہ سےدوسری بارانتخابات ہونے جارہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق برطانیہ میں انتخابات کےسلسلے ووٹنگ کا عمل جاری ہے، جو رات دس بجےتک جاری رہے گا، اس موقع پر سیکیورٹی کے سخت انتظامات کئے گئے ، برطانوی پارلیمنٹ کی 650 نشستوں پر انتخابات ہورہے ہیں۔

کنزرویٹو، لیبر،اسکاٹش نیشنل، لبرل ڈیموکریٹس اورگرین پارٹی سمیت دیگر جماعتیں اور کئی آزاد امیدوار میدان میں ہیں جبکہ ساڑھے چھ سو نشستوں کیلئے مجموعی طور پرتین ہزار تین سو بائیس امیدوار الیکشن لڑرہے ہیں، جن میں سے ستر سے زائد مسلمان بھی شامل ہیں۔

کنزرویٹو اور لیبر پارٹی کے درمیان کڑا مقابلہ ہے تاہم ہنگ پارلیمنٹ بننے کا بھی امکان ہے، چار کروڑساٹھ لا کھ ووٹر حق رائے دہی استعمال کریں گے۔

بریگزٹ کی وجہ سے دوسری بارانتخابات ہونے جا رہے ہیں، نتائج کا اعلان رات گئے شروع کیا جائے گا۔

یوگووکے تازہ پول کے مطابق کنزرویٹو پارٹی کو برتری حاصل ہے ، چھتیس فیصد کیساتھ لیبرپارٹی دوسرے نمبرپر ہے ، برطانیہ میں پانچ سال کےدوران یہ تیسرےانتخابات ہیں، جس کی چھ سو پچاس نشستوں ہیں اور پہلی بارگیارہ سوسےزائدخواتین امیدوارحصہ لے رہی ہیں۔

انتخابی مہم کا آخری روز ووٹرز کو قائل کرنےکیلئےامیدواوں کی سرتوڑ کوششیں کیں ، برطانونیہ میں انتخابی مہم بریگزٹ اور نیشنل ہیلتھ کئیرسروس پرمنحصررہی۔

بورس جانسن کا کہنا تھا بریگزٹ صرف کنزرویٹو پارٹی ہی کراسکتی ہے جبکہ لیبرپارٹی کےجیریمی کوربن بریگزیٹ کےمخالف ہیں اور انہوں نے نیشنل ہیلتھ کئیرسروس کوبہتربنانےکاوعدہ کیا ہے۔

Comments

یہ بھی پڑھیں