The news is by your side.

Advertisement

جرمنی میں معروف شخصیات کو دھماکے سے اڑانے کی دھمکی

برلن : جرمنی کے سیاست دانوں، صحافیوں اور مشہور شخصیات کو بم سے اڑانے کی دھمکی آمیز ای میلز کی تعداد میں اضافہ ہوگیا، پولیس کا خیال رہے کہ اس میں نیونازی گروپ ملوث ہے۔

تفصیلات کے مطابق جرمنی میں گزشتہ کچھ عرصے سے سابق فوجی آمر ایڈ وولف ہٹلر کے حامی (نیو نازی گروپ) کی جانب سے ملک کی معتبر شخصیات کو دھمکی آمیز ای میلز بھیجی جارہی ہیں جن کے آخر میں موجود نشانات نیو نازی گروپ سے مماثلت رکھتے ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کا کہنا ہے کہ ای ملیز کے اختتام میں ایس ایس یو لکھا ہوتا ہے جس کا مطلب (نیشنل سوشلسٹ انڈر گراؤنڈ) ہے۔

مقامی میڈیا کا کہنا ہے کہ مذکورہ گروپ نے لوبیک شہر کے ریلوے اسٹیشن اور گیلزن کرشن کے فنانس آفس کو بم سے اڑانے کی دھمکی دی تھی جس کے بعد حکام نے مذکورہ جگہوں کو خالی کرالیا گیا تھا۔

مقامی میڈیا کے مطابق مبینہ طور پر نیو نازی گروپ کی جانب سے عام شہریوں کو بھی دھماکے سے ہلاک کرنے اور شہریوں پر کیمیائی ہتھیار استعمال کرنے کی دھمکی بھی دی گئی تھی۔

مزید پڑھیں : جرمن پولیس کی کارروائی، نیو نازی گروپ کے 7 دہشت گرد گرفتار

خیال رہے کہ گزشتہ برس اکتوبر میں جرمنی کی پولیس نے شدت پسند تنظیم بنانے کے شبے میں 7 افراد کو گرفتار کرکے نامعلوم مقام پر منتقل کردیا تھا جن کا سن 20 سے 23 برس کے درمیان جبکہ تعلق نیو نازی گروپ سے بتایا گیا تھا۔

جرمن خبر رساں ادارے کا کہنا تھا کہ پولیس نے مذکورہ افراد کو خفیہ اطلاعات موصول ہونے پر جرمنی کے صوبے سیکسنی اور باویریا کے مختلف شہروں میں چھاپہ مار کارروائیوں کے دوران گرفتار کیا ہے۔

جرمن میڈیا کا کہنا ہے کہ گرفتار افراد’ریوولوشن کیمنٹز ‘ نامی شدت پسند تنظیم عمل میں لانے کے لیے سرگرم تھے جس کا مقصد غیر ملکی افراد، سیاست دان اور حکومتی ملازمین کو ہدف بنانا تھا۔

Comments

comments

یہ بھی پڑھیں